ابوبکر بغدادی کا کھوج لگانے والا کتا وائٹ ہاؤس کا مہمان بنے گا

ابوبکر بغدادی کا کھوج لگانے والا کتا وائٹ ہاؤس کا مہمان بنے گا
’کونن‘ نامی یہ کتا گزشتہ ماہ ابوبکر البغدادی کے ٹھکانے پر چھاپہ مارنے کے دوران زخمی ہو گیا تھا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔فوٹو/ ٹرمپ آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ

واشنگٹن: امریکی کارروائی میں ہلاک ہونے والے داعش کے سربراہ ابوبکر البغدادی کا سراغ لگانے والا کتا جلد وائٹ ہاؤس کا مہمان بنے گا۔غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ داعش کے سربراہ ابوبکر البغدادی کا پتہ لگانے میں امریکی کمانڈوز کی مدد کرنے والا ’ہیرو کتا‘ جلد وائٹ ہاؤس کا دورہ کرے گا۔


’کونن‘ نامی یہ کتا گزشتہ ماہ شمال مغربی شام میں ابوبکر البغدادی کے ٹھکانے پر چھاپہ مارنے کے دوران زخمی ہو گیا تھا جو کہ اب ٹھیک ہو کر دوبارہ واپس آ گیا ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کچھ روز قبل اس حوالے سے ایک ٹوئٹ بھی کیا تھا جس میں انہوں نے کتے کی تصویر شیئر کرنے کے ساتھ لکھا تھا کہ اس کتے نے داعش کے سربراہ کے ’پکڑے جانے اور ہلاکت میں اہم کردار ادا کیا۔‘ انہوں نے اس کا نام ظاہر نہیں کیا اور کہا کہ یہ خفیہ ہی رہے گا۔

تاہم، امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے کتے کا نام بتا دیا گیا ہے اور صرف یہی نہیں بلکہ کونن جلد وائٹ ہاؤس کا دورہ بھی کرے گا۔

واضح رہے کہ رواں سال یکم نومبر کو داعش نے اپنے سربراہ ابوبکر البغدادی کی امریکی آپریشن میں ہلاکت کی تصدیق کی تھی۔ داعش کی جانب سے جاری آڈیو بیان میں کہا گیا تھا کہ ’اے وفادار کمانڈر ہم آپ کی موت پر افسردہ ہیں۔‘

ساتھ ہی اس آڈیو بیان میں داعش نے اپنے تنظیم کے نئے سربراہ اور ترجمان کا بھی اعلان کیا تھا اور کہا تھا کہ ’ابو حمزہ القریشی کو تنظیم کا نیا ترجمان مقرر کیا گیا ہے۔‘

دوسری جانب پینٹاگون کے ایک عہدیدار نے بھی تصدیق کی کہ بغدادی کی لاش کو ایک نامعلوم مقام پر سمندر برد کر دیا گیا ہے جیسے 2011 میں القاعدہ کے سربراہ اسامہ بن لادن کی لاش کے ساتھ کیا گیا تھا جب وہ پاکستان میں ایک امریکی کارروائی میں ہلاک کیا گیا تھے۔