نواز شریف کی جس حد تک ہو سکے گی مخالفت کریں گے، ثناء اللہ زہری

Pakistan, sanaullah zehri,Nawaz Sharif
کیپشن:   فائل فوٹو

کوئٹہ: سابق وزیراعلیٰ بلوچستان نواب ثناء اللہ زہری نے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا سابق وزیراعظم نواز شریف اور مسلم لیگ (ن) کے تاحیات قائد کی فطرت میں ڈسنا ہے۔ 2010 میں (ن) لیگ کو جوائن کیا تھا اور اس وقت نواز شریف کو بلوچستان میں کوئی نہیں جانتا اور آ کر ادھر رلتا رہتا تھا جبکہ لیگی قائد نے تو اپنے محسنوں کو نہیں چھوڑا۔

انہوں نے کہا نواز شریف نے جنرل جیلانی کو نہیں چھوڑا جبکہ ضیاالحق کے بیٹے نے کہا نواز شریف سے جیسا بے وفا کوئی نہیں اور جن لوگوں نے نواز شریف کے ساتھ اچھائی کی انہیں ڈسا اور غوث علی شاہ سمیت بہت ساری ایسی مثالیں ہے جن میں ہمیں بھی استعمال کیا گیا۔ 

نواب ثناء اللہ زہری نے مسلم لیگ ن سے علیحدگی کا اعلان کرتے ہوئے کہا آج سے ہمارا دشمن نواز شریف ہے اور میں مسلم لیگ (ن) سینٹرل ایگزیکٹیو کمیٹی سے بھی مستعفیٰ ہو رہا ہوں۔ نواز شریف کی جس حد تک ہو سکے گی مخالفت کریں گے اور ان کے اصل چہرے کو ملک بھر کے ہر گلی کوچے میں دکھائیں گے۔ 

سابق وزیراعلیٰ بلوچستان نے کہا نواز شریف کی بے رخی شروع سے ہی ایسی تھی اور مجھے لوگوں نے کہا تھا ان سے خیرکی توقع نہ رکھیں۔ چودھری نثارنے خود اعتراف کیا تھا کہ ان کی توقعات سے زیادہ بلوچستان میں سیٹیں جیتی ہیں۔ نثار نے فون کر کے کہا ڈاکٹر عبدالمالک کو وزیراعلیٰ بنا رہے ہیں جس کے جواب میں نے کہا کہ فیصلہ بلوچستان کے لوگ نہیں مانیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ن لیگ کے لیے دن رات محنت کی اور مجھے مسلم لیگ ن کا بلوچستان میں صدر بنایا گیا۔ اپنی پارٹی کو (ن) لیگ میں ضم کیا تھا اور نواز شریف سے کہا تھا کہ آپ بے وفا ہیں اور لوگوں کو استعمال کر کے چھوڑ دیتے ہیں تب نواز شریف نے کہا ایسا نہیں ہو گا۔