پرویز مشرف کا 20 لاکھ روپے مچلکوں کی واپسی کیلئے سپریم کورٹ سے رجوع

پرویز مشرف کا 20 لاکھ روپے مچلکوں کی واپسی کیلئے سپریم کورٹ سے رجوع
اکبر بگٹی قتل کیس میں پرویز مشرف نے 10، 10 لاکھ روپے کے دو مچلکے جمع کرائے تھے۔۔۔۔فائل فوٹو

اسلام آباد: سابق صدر پرویز مشرف نے اکبر بگٹی قتل کیس میں 20 لاکھ روپے ضمانتی مچلکوں کی واپسی کے لیے سپریم کورٹ سے رجوع کر لیا۔ سپریم کورٹ نے پرویز مشرف کی جانب سے دائر زرضمانت کی واپسی کی درخواست سماعت کے لیے مقرر کرتے ہوئے اس پر بینچ بھی تشکیل دے دیا۔


جسٹس مشیر عالم کی سربراہی میں سپریم کورٹ کا تین رکنی بینچ 12 ستمبر کو پرویز مشرف کی زرضمانت واپسی کی درخواست کی سماعت کرے گا۔ درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ پرویز مشرف کو اکبر بگٹی قتل کیس سے بری کیا جاچکا ہے اس لیے زرضمانت کی رقم واپس کی جائے۔

یاد رہے کہ اکبر بگٹی قتل کیس میں پرویز مشرف نے 10، 10 لاکھ روپے کے دو مچلکے جمع کرائے تھے اور عدالت نے 20 لاکھ روپے مچلکوں کے عوض ان کی ضمانت منظور کی تھی۔

جنوری 2016 میں کوئٹہ کی انسداد دہشت گردی کی عدالت نے اکبر بگٹی قتل کیس میں نامزد سابق صدر پرویز مشرف، سابق وفاقی وزیر داخلہ آفتاب احمد خان شیر پاؤ اور سابق صوبائی وزیر داخلہ میر شعیب نوشیروانی کو بری کر دیا تھا۔