ملک کی سیاسی فضاء تعفن زدہ ہوچکی، مولانا فضل الرحمن

اسلام آباد: امیر جے یو آئی (ف) مولانا فضل الرحمن نے کہا ہے کہ ملک کی سیاسی فضاء تعفن زدہ ہوچکی ایک دوسرے پر کیچڑ اچھالنے کی سیاست کا خاتمہ ہونا چاہئے ،سیاستدانوں پر مالیاتی اور اخلاقی کرپشن کے الزامات عائد کئے جا رہے ہیں۔ گذشتہ کئی دنوں سے جو ماحول بنایا جا رہا ہے اس سے لگتا ہے کہ معاشرہ اخلاقی گراوٹ کا شکار ہوگیا ہے۔

ان خیالات کااظہار انہوں نے اسلام آباد میں اپنی رہائش گاہ پر جے یو آئی پنجاب کے امیر ڈاکٹر قاری عتیق الرحمن کو دئیے گئے عشائیہ میں گفتگو کرتے ہوئے کیا مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ ملک میں صاف ستھری اور سنجیدہ سیاست ہونی چاہئے، ایک دوسرے پر کیچڑ اچھالنے کی سیاست کا خاتمہ ہونا چاہئے جمعیت علماء اسلام ملک کے آئین، پارلیمنٹ اور جمہوریت کے ساتھ کھڑی ہے مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ ہم ایک نئے دور کی طرف جا رہے ہیں، ایک دوسرے کو چور کہنے سے کونسا سیاسی کلچر تخلیق ہو رہا ہے ہم جس دور میں ہیں ہمارے پاس غلطی کی گنجائش نہیں، یہ سب خود بخود نہیں ہو رہا اس کی آبیاری بین الاقوامی سطح پر ہو رہی ہے، کوئی مالیاتی کرپشن کی بات کر رہا ہے، کوئی اخلاقی کرپشن کی بات کر رہا ہے، جن سیاستدانوں سے عوام نالاں ہیں انہیں وہ خود اقتدار میں لائے ہیں۔انہوں نے کہاکہ ملک کے تمام اداروں کو عالمی تناظر میں معاملات کو دیکھ کر سوچنا ہوگا۔

مصنف کے بارے میں