بغداد: داعش کے زیر قبضہ ایک عراقی قصبے پر فضائی حملوں کے نتیجے میں ایک سو بیس شہری ہلاک ہو گئے ہیں۔ یہ بات ایک عراقی رکنِ پارلیمان فارس الافارس نے جرمن نیوز ایجنسی ڈی پی اے سے باتیں کرتے ہوئے بتائی ہے۔

گزشتہ روز شامی سرحد کے قریب قائم نامی قصبے پر کی جانے والی بمباری کے نتیجے میں کوئی ایک سو ستّر افراد زخمی بھی ہو گئے۔ الفارس نے مزید تفصیلات بتائے بغیر کہا کہ دارالحکومت بغداد سے پانچ سو کلومیٹر مغرب کی جانب واقع اس قصبے کے مرکزی بازار پر یہ فضائی حملے عراقی طیاروں نے کیے۔

تاحال بغداد حکومت کی جانب سے ان رپورٹوں پر کوئی سرکاری بیان سامنے نہیں آیا ہے۔

مصنف کے بارے میں