مبینہ بیٹی چھپانے کے معاملے پر عمران خان سے جواب طلب 

مبینہ بیٹی چھپانے کے معاملے پر عمران خان سے جواب طلب 

اسلام آباد: ہائیکورٹ نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین اور سابق وزیراعظم عمران خان کے خلاف کاغذات نامزدگی میں مبینہ بیٹی کو چھپانے کے معاملے پر نااہلی کیس میں الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) اور وفاق کو پری ایڈمشن نوٹس جاری کرتے ہوئے 25 جنوری تک جواب طلب کر لیاہے۔ 

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس عامر فاروق نے محمد ساجد نامی شہری کی درخواست پر پری ایڈمشن نوٹس جاری کئے۔ عدالت نے عمران خان کو مبینہ بیٹی ٹیریان جیڈ وائٹ کو کاغذات نامزدگی میں چھپانے پر نااہل قرار دینے کی درخواست کے قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کر رکھا تھا۔ 

ذرائع کے مطابق عدالت نے پٹیشن میں بنائے گئے تینوں فریقین وفاق، الیکشن کمیشن اور عمران خان کو پری ایڈمشن نوٹس جاری کرتے ہوئے درخواست کے قابل سماعت ہونے پر دلائل طلب کر لئے ہیں۔ 

واضح رہے کہ درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ عمران خان نے اپنے کاغذات نامزدگی میں مبینہ بیٹی کا ذکر نہیں کیا اور معلومات چھپائیں، عمران خان نے برطانیہ میں رہائش پذیر بیٹی ٹیریان جیڈ وائٹ کی گارڈین شپ کیلئے ضروری اقدامات کئے، وہ صادق اور امین نہیں رہے لہٰذا انہیں بطور رکن اسمبلی نااہل قرار دیا جائے۔

مصنف کے بارے میں