بھارتی ڈائریکٹر علی عباس ظفر نے " ایکسٹرا" سے شادی کی

بھارتی ڈائریکٹر علی عباس ظفر نے
سورس:   File photo

ممبئی ، معروف بھارتی فلم ڈائریکٹر علی عباس ظفر کی شادی کی حقیقت سامنے آگئی ۔ علی عباس ظفر نے اپنی فلم میں کام کرنے والی ایک ایکسڑا سے شادی کی ہے ۔ 

پچھلے دنوں معروف بھارتی ڈائریکٹر علی عباس ظفر نے سوشل میڈیا پر اپنی شادی کی خبر شیئر کی لیکن انہوں نے اپنی دلہن کی تصویر نہیں دکھائی تھی جس پر یہ بحث چل پڑی کہ علی عباس ظفر کی شادی کی خبر جھوٹی ہے اور اگر یہ خبر سچ ہے تو پھر جس سے شادی ہوئی وہ لڑکی کون ہے ۔ 

ڈائریکٹر علی عباس ظفر کی شادی کے حوالے سے ابھی چہ میگوئیاں جاری تھیں کہ انہوں نے سوشل میڈیا پر ایک اور پیغام میں بتادیا کہ میں نے 

ایرانی نژاد فرانسیسی ماڈل الیسیا سے شادی کی ہے ۔ شادی کی یہ تقریب بھارتی شہر ڈہرا دھون میں ہوئی تھی جس میں چند قریبی عزیزواقارب سمیت قریبی دوستوں نےشرکت کی تھی ۔ 

ڈائریکٹر علی عباس ظفر اب تک کئی کامیاب فلموں کی ڈائریکشن دے چکے ہیں اور ان کا شمار بھارت کے معروف ٖفلم ڈائریکٹرز میں ہونے لگا ہے ان کی ڈائریکشن میں بننے والی فلموں میں" میرے برادر کی دلہن " ، " غنڈے "، "سلطان "، "ٹائیگرزندہ ہے" اور بھارت شامل ہیں جبکہ کئی پراجیکٹس پر کام ہورہا ہے ۔ 

علی عباس ظفر نے بتایا ہے کہ ان کی  الیسیا سے  سلمان خان کی فلم ٹائیگر زندہ ہے کی شوٹنگ کے دوران پہلی ملاقات ہوئی تھی  جس کے بعد 

الیسیا سلمان خان کی ہی دوسری فلم " بھارت " میں فلمائے گئے گیت سلو موشن میں اداکارہ ڈشاپٹانی کے ساتھ ڈانس کرتی ہوئی بھی نظر آئی تھیں ۔ 

ان کا کہنا تھا کہ میرے والدین بزرگ ہوچکے ہیں اس کے علاوہ کورونا وائرس کا شکار بھی رہ چکے ہیں اس لئے میں نے جلد شادی کا فیصلہ کیا ورنہ ہماری شادی  اگلے سال ہونا تھی ۔ انہوں نے کہا کہ ہماری شادی فلمی انداز میں ہوئی ہے لیکن ہم نے اس کی باقاعدہ پلاننگ کی تھی اور یہ فیصلہ اچانک نہیں کیا ۔