سعودی عرب میں 13لاکھ59ہزار345 غیر قانونی تارکین  کوگرفتار

سعودی عرب میں 13لاکھ59ہزار345 غیر قانونی تارکین  کوگرفتار

فوٹو بشکریہ فیس بک

ریاض: سعودی عرب میں پاک وطن مہم کے تحت اب تک 13لاکھ59ہزار345 غیر قانونی تارکین  کوگرفتار  کر لیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ان میں سے 10لاکھ17ہزار427 تارکین اقامہ قوانین کی خلاف ورزی کے مرتکب تھے، 2لاکھ33ہزار125تارکین لیبر قوانین کی خلاف ورزی کر رہے تھے جبکہ ایک لاکھ8ہزار 793تارکین سرحدی قوانین کی خلاف ورزی کے مرتکب تھے۔مشترکہ سیکیورٹی فورس نے کہا ہے کہ یہ اعداد وشمار26صفر1439سے 21شوال 1439تک کے ہیں۔ غیر قانونی تارکین سے پاک وطن مہم کے تحت مملکت کے مختلف علاقوں میں تفتیشی کارروائی جاری ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں: پیپلزپارٹی اورن لیگ اقتدارمیں پیسےبنانےآتی ہیں، میثاق جمہوریت کامطلب مل کرملک کولوٹنا ہے: عمران خان
   

اعلامیہ میں کہا گیا کہ مہم کے دوران اب تک 21ہزار 112افراد کو غیر قانونی طور پر دراندازی کرتے ہوئے پکڑا ہے، ان میں سے 52 فیصد کا تعلق یمن سے تھا، 45فیصد ایتھوپین تھے جبکہ 3فیصد دیگر ملکوں سے تعلق رکھتے تھے۔اسی طرح882افراد گرفتار ہوئے ہیں جو غیر قانونی طور پر مملکت سے باہر جانے کی کوشش کر رہے تھے۔ غیر قانونی تارکین کو پناہ دینے یا انہیں مختلف سہولتیں فراہم کرنے کے الزام میں اب تک 2254افراد گرفتار ہوئے ہیں۔ ان میں سے 446سعودی شہری ہیں۔ 

یہ خبر بھی پڑھیں:  نگران حکومت نےپٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں4روپے 26پیسے کمی کردی
 

رپورٹ کے مطابق غیر قانونی تارکین کو مختلف سہولتیں فراہم کرنے کے الزام میں گرفتار شدگان میں سے 419افراد کے ساتھ قانونی کارروائی کرنے کے بعد رہا کردیا گیا جبکہ 27سعودی شہری ابھی تک قید میں ہیں۔ اقامہ ولیبر قوانین کی خلاف ورزی کے مرتکب 3لاکھ46ہزار976تارکین کو مملکت سے بے دخل کردیا گیا ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں