شاہ محمود قریشی کا کینیڈا واقعے پر پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے سے قبل بات کرنے سے انکار

شاہ محمود قریشی کا کینیڈا واقعے پر پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے سے قبل بات کرنے سے انکار
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

اسلام آباد: وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے ایوان میں کینیڈا واقعے پر پوسٹ مارٹم رپورٹ سے قبل بات کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اسلامو فوبیا کا بڑھتا ہوا رجحان ہے جو تشویشناک ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق ایوان میں اظہار خیال کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ 7 جون کو کینیڈا میں افسوسناک واقعہ پیش آیا جس سے متعلق تفصیلات معلوم کر لی ہیں مگر میں نہیں چاہتا کہ اٹاپسی رپورٹ سے پہلے کوئی بات کروں۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ یہ انفرادی واقعہ نہیں بلکہ یہ اسلاموفوبیا کا بڑھتا ہوا رجحان ہے جو تشویشناک ہے، اس سے قبل نیوزی لینڈ میں جو مسجد میں حملہ ہوا وہ بھی سب کے سامنے ہے۔

دوسری جانب وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے کنیڈین ہائی کمشنر وینڈی گلمور نے وزارت خارجہ میں ملاقات کی جس دوران کینیڈا میں پاکستانی نژاد خاندان کے ساتھ پیش آنے والے واقعے پر گفتگو کیساتھ ساتھ اسلاموفوبیا کے بڑھتے ہوئے رجحان اور دیگر امور پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔

اس موقع پر شاہ محمود قریشی کا کہنا تھاکہ کینیڈا میں پاکستانی نڑاد فیملی کے ساتھ المناک واقعہ پر بہت رنجیدہ ہیں اور یہ قتل اسلاموفوبیا اور دہشت گردی کی واضح مثال ہے، مذکورہ واقعے پر کینیڈین وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو کے مثبت ردعمل کا خیر مقدم کرتے ہیں۔

وزیرخارجہ کا کہنا تھاکہ مغرب میں مسلمانوں کے خلاف نفرت انگیز واقعات اسلاموفوبیا کی موجودگی کا ثبوت ہیں، وزیر اعظم اور میں نے بطور وزیر خارجہ اسلاموفوبیا کے خلاف آواز اٹھائی، اسلاموفوبیا کے حوالے سے عالمی سطح پر موثر اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔

کینیڈین ہائی کمشنر نے کینیڈا میں پاکستانی نژاد خاندان کے ساتھ المناک واقعے پر افسوس کا اظہار کیا جبکہ کینیڈین ہائی کمشنر نے واقعے کی تحقیقات اور ذمہ داران کے خلاف کارروائی کی یقین دہانی کروائی۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز کینیڈا کے شہر لندن اونٹاریو میں المناک واقعہ پیش آیا اور دہشت گرد نے پاکستانی خاندان کے 4 افراد کو ٹرک تلے روند ڈالا جس کے نتیجے میں ایک مرد، دو خواتین اور ایک بچی جاں بحق ہو گئے جبک واقعے میں ایک کمسن شدید زخمی ہوا۔ 

جاں بحق افراد میں عمر رسیدہ ماں، فزیوتھراپسٹ بیٹا سلمان، بہو اور کمسن پوتی جاں بحق ہوئی جبکہ 9 برس کا پوتا شدید زخمی ہوا۔ لاہور سے تعلق رکھنے والے خاندان کو ٹرک سے روندنے والا دہشت گرد مذہبی تعصب میں مبتلا تھا جسے پولیس نے گرفتار کر کے تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے۔