وزیراعظم نے ڈان لیکس پر نوٹیفکیشن کی منظوری دے دی

وزیراعظم نے ڈان لیکس پر نوٹیفکیشن کی منظوری دے دی

اسلام آباد: ذرائع کے مطابق وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان اور وزیر اعظم نواز شریف کے درمیان آج ایک اور اہم ملاقات ہوئی ہے۔ وزیر داخلہ نے ڈان لیکس تحقیقاتی کمیشن کی رپورٹ پر تیار کردہ تفصیلی نوٹیفکیشن وزیراعظم کو پیش کر دیا۔ وزیراعظم نے نوٹیفکیشن کی منظوری دیتے ہوئے چودھری نثار کو نئے نوٹیفکیشن میں فوج کے تحفظات دور کرنے کی بھی ہدایت کر دی۔ ملاقات میں ڈان لیکس تحقیقاتی کمیشن کی رپورٹ پبلک کرنے پر مشاورت کی گئی۔


ذرائع کا کہنا ہے اس اہم ملاقات میں ڈان لیکس اسکینڈل میں ملوث تمام شخصیات کے خلاف فوری کارروائی کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ وزیراعظم کی منظوری کے بعد وزارت داخلہ کسی بھی وقت نوٹیفکیشن جاری کر دے دی۔

واضح رہے گزشتہ دنوں وزیر اعظم نواز شریف اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے درمیاں بھی ملاقات ہوئی تھی جس میں آرمی چیف نے ڈان لیکس کے نوٹیفکیشن پر پاک فوج کے تحفظات کے حوالے سے بات کی جس پر وزیر اعظم نے آرمی چیف کو تحفظات دور کرنے اور نیا نوٹیفکیشن جاری کرنے کا یقین دلایا تھا۔ ملاقات کے بعد وزیر اعظم نے وزیر داخلہ کو بلا کر ڈان لیکس پر نئے نوٹیفکیشن کے حوالے سے ہدایات بھی دیں تھیں۔ 

22 اپریل کو وزیر اعظم ہاؤس سے نوٹیفکیشن جاری کیا گیا تھا جس میں کہا گیا تھا کہ وزیراعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ وزیراعظم نے وزارت اطلاعات کے اعلیٰ افسر راؤ تحسین کے خلاف ای ڈی رولز 1973 تحت کارروائی کی منظوری بھی دی تھی۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں