سعودی حکومت نے افطار کروانے کے خواہشمندوں کے لیے طریقہ کار کا اعلان کر دیا

سعودی حکومت نے افطار کروانے کے خواہشمندوں کے لیے طریقہ کار کا اعلان کر دیا
عربی زبان میں ”السقایہ والرفادة“ کا مطلب (پیاسوں کو سیراب کرنا اور بھوکوں کی ضیافت کرنا) ہے,فوٹو بشکریہ عرب نیوز

مکہ مکرمہ : سعودی عرب میں رواں ماہ رمضان المبارک 17مئی سے شروع ہونے کا امکان ہے ۔ اور رمضان المبارک میں سعودی عرب میں رمضان دستر خوان لگانے کے بعد حکومت نے اہم اعلان کر دیا ہے ۔تفصیلات کے مطابق مکہ مکرمہ گورنریٹ کی نگرانی میں کام کرنے والی ”السقایہ والرفادة“ کمیٹی نے رمضان 1439ھ کے دوران مسجد الحرام مکہ مکرمہ کی دیگر مساجد ، خیموں اور میدانوں میں افطار دسترخوان پیش کرنے میں دلچسپی رکھنے والوں سے درخواستیں طلب کرلیں۔


عربی زبان میں ”السقایہ والرفادة“ کا مطلب (پیاسوں کو سیراب کرنا اور بھوکوں کی ضیافت کرنا) ہے۔ مکہ مکرمہ گورنریٹ نے یہ کمیٹی ضیوف الرحمن ، زائرین اور معتمرین کیلئے خورونوش کا بندوبست کرنے کے خواہشمندوں کی سہولت کیلئے قائم کی ہے۔ مکہ مکرمہ گورنریٹ کا نصب العین یہ ہے کہ زائرین کے کھلانے پلانے کا انتظام منظم اور مہذب شکل میں ہو۔

جو لوگ بھی روزہ داروں کی ضیافت میں دلچسپی رکھتے ہوں وہ العزیزیہ محلے میں کمیٹی کے دفتر سے رجوع کرسکتے ہیں۔ یہ پہلی منزل پر ہے علاوہ ازیں آن لائن SR-MKH.ORG.SA پر درخواست بھیج سکتے ہیں۔ یہ کمیٹی مکہ گورنریٹ کے ماتحت ہے۔