بغاوت کیس : پیشی کے موقع پر نواز شریف سیلیفیاں بنانے والوں پر غصہ میں آگئے

بغاوت کیس : پیشی کے موقع پر نواز شریف سیلیفیاں بنانے والوں پر غصہ میں آگئے

تصویر بشکریہ سوشل میڈیا

لاہور:بغاوت کیس میں پیشی کے موقع پر نواز شریف سیلیفیاں بنانے والوں پر غصہ میں آگئے۔ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف بغاوت کیس میں لاہور ہائی کورٹ میں پیش ہوئے۔

اس موقع پر مسلم لیگ (ن) کے کارکنوں اور رہنماؤں کی بڑی تعداد عدالت کے اندر اور باہر موجود تھی۔ رش کی وجہ سے کمرہ عدالت میں بدنظمی دیکھنے میں آئی۔ لیگی کارکنوں کی دھکم پیل سے کمرہ عدالت کے دروازے کے شیشے ٹوٹ گئے جب کہ پولیس اور کارکنوں میں تلخ کلامی بھی ہوئی۔

نوازشریف کمرہ عدالت داخل ہوئے تو رش میں پھنس گئے جب کہ حبس کی وجہ سے خاتون وکیل بے ہوش ہوگئی۔ مسلم لیگ (ن) کے وکلا نوازشریف کے ساتھ سیلفیاں بناتے رہے تو نواز شریف سیلیفیاں بنانے والوں پر غصہ میں آگئے۔ نواز شریف نے کہا کہ یار سیلفیاں چھوڑو مجھے بیٹھے کی جگہ دو۔

کمرہ عدالت میں وکلا کی بڑی تعداد میں موجودگی کی وجہ سے نوازشریف اور شاہد حاقان کو کمرہ عدالت میں پہنچنے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑا۔ تمام کارروائی کے دوران شاہد خاقان عباسی کھڑے رہے جبکہ نواز شریف وکلا کے درمیان پھنس کر بیٹھنے میں کامیاب ہوگئے۔