مشرف کیخلاف سنگین غداری کیس کی سماعت روزانہ کی بنیاد پر کرنے کا فیصلہ

مشرف کیخلاف سنگین غداری کیس کی سماعت روزانہ کی بنیاد پر کرنے کا فیصلہ
عدالت نے فریقین کو آئندہ سماعت سے قبل تحریری دلائل جمع کرانے کا حکم دے دیا۔۔۔۔۔۔فوٹو/ سوشل میڈیا

اسلام آباد: خصوصی عدالت نے سابق صدر پریوز مشرف کے خلاف سنگین غداری کیس کی سماعت روزآنہ کی بنیاد پر کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔حکومت نے چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس وقاراحمد سیٹھ کو سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف سنگین غداری کیس کی سماعت کرنے والی خصوصی عدالت کا نیا سربراہ مقرر کر دیا ہے۔ جسٹس وقاراحمد سیٹھ جسٹس طاہرہ صفدر کی ریٹائرمنٹ پرسربراہ مقرر ہوئے ہیں۔


پرویز مشرف سنگین غداری کیس کی سماعت کے دوران پرویز مشرف کے وکیل رضا بشیر کی جانب سے درخواست دائر کی گئی کہ وہ ڈینگی کا شکار ہیں اس لئے صحتیابی تک سماعت ملتوی کی جائے۔

خصوصی عدالت نے 24 اکتوبر سے روزانہ کی بنیاد پر سماعت کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا کہ خصوصی عدالت ہفتے کے روز بھی سماعت کرے گی۔ عدالت نے فریقین کو آئندہ سماعت سے قبل تحریری دلائل جمع کرانے کا حکم دے دیا۔