وزیراعظم نے غلام سرور خان کو کابینہ کمیٹی برائے توانائی کے عہدے سے ہٹا دیا

وزیراعظم نے غلام سرور خان کو کابینہ کمیٹی برائے توانائی کے عہدے سے ہٹا دیا
فائل فوٹو

اسلام آباد:وفاقی وزیر پیٹرولیم غلام سرور خان کو وزیراعظم عمران خان نے کابینہ کمیٹی برائے توانائی کے عہدے سے ہٹا دیا جبکہ ان کی جگہ وزیر خزانہ اسد عمر کو چیئرمین مقرر کر دیا گیا۔


میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے کابینہ کی توانائی کمیٹی کی تشکیل نو کرتے ہوئے وفاقی وزیر پیٹرولیم غلام سرور خان سے چیئرمین شپ واپس لے لی۔

کابینہ کی توانائی کمیٹی کی تشکیلِ نو کے حوالے سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق اب وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر توانائی کمیٹی کے چیئرمین ہوں گے۔

نوٹیفکیشن میں بتایا گیا کہ وفاقی وزیر پیٹرولیم غلام سرور خان تشکیل نو کے بعد کمیٹی کے ممبر ہوں گے۔توانائی کمیٹی کے دیگر ممبران میں پاور، منصوبہ بندی اور ریلوے کے وفاقی وزراء شامل ہوں گے۔توانائی کمیٹی میں وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت و انڈسٹری عبدالرزاق داؤد بھی شامل ہیں۔

خیال رہے وزیراعظم عمران خان گیس کے بلوں کی قیمتوں میں اضافے پر برہم بھی ہوئے تھے۔وزیراعظم عمران خان لاہور میں اعلیٰ سطح کے اجلاس میں گھریلو صارفین کے لیے گیس کے بلوں میں غیرمعمولی اضافے کا نوٹس لیتے ہوئے وفاقی وزیرپٹرولیم وگیس سے رپورٹ طلب کی تھی۔