آئی سی سی نے فاسٹ باؤلر پر دو سال کی پابندی لگا دی

آئی سی سی نے فاسٹ باؤلر پر دو سال کی پابندی لگا دی
فوٹو بشکریہ آئی سی سی آفیشل ٹوئٹر

ہرارے : آئی سی سی نے غیر قانونی باؤلنگ ایکشن کے حامل باؤلرز کیخلاف شکنجہ مزید سخت کر دیا ہے ۔ پہلے آف اسپنر باؤلرز کیخلاف آئی سی سی ایکشن میں آیا اور متعدد باؤلرز پر پابندی عائد کی ۔آئی سی سی کے اس گھیرے میں پاکستانی باؤلرز بھی آئے جن میں سعید اجمل تو  اس گرداب میں ایسے پھنسے کہ ان کا کیریئر ہی ختم ہو گیا ۔


اب انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کےگھیرے میں زمبابوے کے فاسٹ باؤلربرائن ویٹوری آئے  ہیں آئی سی سی نے برائن ویٹوری پر 2 سال کی پابندی عائد کر دی ہے ۔یہ دو سال کے اندر تیسرا موقع ہے جب ویٹوری کو پابندی کا سامنا کرنا پڑا۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان جانے کیلئے فیملی کے فیصلے کا انتظار ہے ، شین واٹسن

 ویٹوری کو رواں سال جنوری میں 12 ماہ کی معطلی کے بعد انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی طرف سے دوبارہ انٹرنیشنل کرکٹ میں باؤلنگ کی اجازت ملی تھی تاہم چار میچز کھیلنے کے بعد ہی وہ دوبارہ غیرقانونی باؤلنگ ایکشن کی زد میں آ گئے۔زمبابوے میں جاری ورلڈ کپ کوالیفائر ٹورنامنٹ میں 4 مارچ کو نیپال کے خلاف کھیلے گئے میچ کے دوران امپائرز نے ان کے ایکشن کو رپورٹ کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:شین واٹسن نے پی ایس ایل سیزن 3 کا انتہائی شاندار اعزاز اپنے نام کر لیا

آئی سی سی نے ایمپائرز کی رپورٹ پر ان کے ایکشن کو غیرقانونی قرار دیتے ہوئے ہوئے انہیں دوبارہ باؤلنگ سے روک دیا اور ویٹوری کو واپسی کیلئے دوبارہ ایکشن ٹیسٹ پاس کرنا ہو گا۔واضح رہے کہ جنوری 2016 میں پہلی مرتبہ ان کے ایکشن کو رپورٹ کیا گیا تھا اور چھ ماہ بعد ایکشن کی درستگی کے بعد انہیں دوبارہ باؤلنگ کی اجازت ملی تاہم نومبر 2016 میں ہی دوسری مرتبہ ان کے ایکشن کو غیرقانونی قرار دیا گیا۔جنوری 2018 میں آئی سی سی نے ان کے ایکشن کو قانونی قرار دیتے ہوئے انہیں دوبارہ انٹرنیشنل کرکٹ میں باؤلنگ کی اجازت دی تھی لیکن اب ان کا ایکشن دوبارہ رپورٹ ہو گیا۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں