سندھ اسمبلی اجلاس میں اپوزیشن کا احتجاج، امداد پتافی کے وزیراعظم کیخلاف نازیبا الفاظ

سندھ اسمبلی اجلاس میں اپوزیشن کا احتجاج، امداد پتافی کے وزیراعظم کیخلاف نازیبا الفاظ

کراچی: سندھ اسمبلی میں پیپلز پارٹی کی جانب سے مخصوص نشستوں کے حوالے سے قرار داد جمع کرانے پر اپوزیشن نے ہنگامہ برپا کر دیا۔ اپوزیشن جماعتوں کے اراکین نے اسپیکر کے ڈائس کا گھیراؤ کر لیا۔ گو شہلا گو اور گو زرداری گو کے نعرے لگاتے رہے۔


ڈپٹی اسپیکر نے پیپلز پارٹی کے ارکان کو بولنے کا موقع دیا تو جیالوں نے خوب دل کی بھڑاس نکالی۔ پیپلز پارٹی کے رہنما امداد پتافی نے اپوزشن کی ہنگامہ آرائی کے دوران چیخ چیخ کر تقریر کی اور جوش خطابت میں وزیراعظم کے خلاف نازیبا الفاظ بھی کہہ ڈالے۔

پیپلز پارٹی رہنما منظور وسان نے اپوزیشن کو آڑے ہاتھوں لے لیا اور کہا ہر دور میں کرپشن کا سہرہ فنکشنل لیگ اور ایم کیو ایم کے سر جاتا ہے۔ ہنگامہ آرائی کے بعد اپوزیشن ارکان ایوان سے واک آوٹ کر گئے۔

یاد رہے سندھ اسمبلی کے اجلاس کے دوران ہی امداد پتافی نے فنکشنل لیگ کی رہنما نصرت سحر عباسی کو ڈرامہ کوئین کہا تھا جس پر ایوان میں ہنگامہ کھڑا ہو گیا تھا۔ اس کے بعد انہوں نے نصرت سحر عباسی کو سر پر دوپٹہ پہنایا اور ان سے جھک کر معافی مانگی تھی۔ 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں