پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کی چیرمین شپ پر ساتھیوں نے غلط مشورہ دیا، وزیر اعظم عمران خان

پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کی چیرمین شپ پر ساتھیوں نے غلط مشورہ دیا، وزیر اعظم عمران خان
فائل فوٹو

لاہور:وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ شہباز شریف کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا چیئرمین بنانا میری بڑی غلطی تھی ۔


 

تفصیلات کے مطابق ، لاہور میں وزیراعظم عمران خان کے زیر صدارت اجلاس میں وزراء نے بيوروکريسی کیخلاف شکایات کے انبار لگا دیے۔وزیر توانائی ڈاکٹر اختر ملک نے اپنے محکموں کے افسران کے خلاف بولتے  ہوئے کہا کہ مختلف رپورٹس طلب کیں مگر مل نہیں سکیں۔

 

وزیر خوراک سمیع اللہ چودھری نے اپنے خلاف ہونی والی سازشوں کا رونا رویا اورکہا کہ کسانوں کو تمام واجبات دلوائے مگر کام کرنے پر کرپشن کے جھوٹے الزام لگا دیے گئے۔

 

متعدد ارکان اسمبلی کا کہنا تھا کہ بيوروکريسی ہماری بات نہيں سنتی، کيسے کام کريں؟ ایک صوبائی وزیر کا کہنا تھا کہ لاہور ويسٹ مينجمنٹ کمپنی پیسہ کھانے والی مشین بن چکی ہے۔ جو ڈلیور نہیں کر سکتی اس کمپنی کو کیوں جاری رکھا جائے؟

 

اجلاس میں وزیراعظم نے کہا کہ مجھ سے بڑی غلطی ہوئی کہ شہباز شریف کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا چیئرمین بنایا، میرے ساتھیوں نے اس معاملے پر غلط مشورہ دیا۔