گورنر پنجاب کی برطرفی، سابق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کا موقف بھی آ گیا

گورنر پنجاب کی برطرفی، سابق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کا موقف بھی آ گیا

لاہور: سابق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے کہا ہے کہ گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ نے آئینی ذمہ داریاں پوری کرتے ہوئے اسمبلی پر دھاوا بولنے والے بد معاش مافیا کا راستہ روکا۔

تفصیلات کے مطابق سردار عثمان بزدار نے گورنر پنجاب کو ہٹائے جانے کی مخالفت کی اور سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری اپنے پیغام میں لکھا ’غیر آئینی طریقے سے گورنر پنجاب عمر چیمہ کو برطرف کرنے کے اقدام کو مسترد کرتے ہیں۔‘ 

واضح رہے کہ وفاقی حکومت نے گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ کو عہدے سے ہٹا دیا ہے اور کابینہ ڈویژن نے اس ضمن میں نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیا ہے جبکہ نئے گورنر کی تعیناتی تک سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الٰہی قائم مقام گورنر رہیں گے۔ 

وفاقی حکومت نے 17 اپریل کو گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ کو ہٹانے کی سمری صدر مملکت کو بھیجی تھی جسے مسترد کر دیا گیا تھا تاہم سمری کی آئینی مدت مکمل ہونے کے بعد کابینہ ڈویژن نے عمر چیمہ کی برطرفی کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے۔ 

دوسری جانب سابق گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ کا کہنا ہے کہ صدر مملکت عارف علوی کی جانب سے سمری مسترد ہونے کے باوجود عہدے سے ہٹانے کا غیر آئینی نوٹیفیکیشن مسترد کرتا ہوں۔ آئینی ماہرین سے مشاورت جاری ہے اور جلد آئندہ کا لائحہ عمل کا اعلان کروں گا۔ 

مصنف کے بارے میں