کورونا وائرس کے باعث امیر ممالک کم وسائل والے ملکوں کی مدد کریں, بلاول بھٹو زرداری

کورونا وائرس کے باعث امیر ممالک کم وسائل والے ملکوں کی مدد کریں, بلاول بھٹو زرداری
کیپشن:   Image Source: File Photo

لاہور:چیئر مین بلاول بھٹو زرداری نے امیر ممالک کو کم وسائل والے ملکوں کی مدد کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان بھی کورونا سے بری طرح متاثر ہوا ہے۔ اگر پاکستان میں کورونا کا پھیلاؤ بڑھا تو ہمارا نظام صحت بیٹھ جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق ،  بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس پھیلنے کے بعد اپوزیشن نے وفاقی حکومت کو مشترکہ کاوشوں کی پیشکش کی ہے۔ افسوس کہ وفاقی حکومت کورونا سے نمٹنے کیلئے سست روی سے کام کررہی ہے۔

انٹرویو کے دوران ان کا مزید کہنا تھا کہ ہمارے پاس تو اٹلی اوربرطانیہ کے مقابلے میں صحت کا نظام بہت کمزورہے۔ ا گر پاکستان میں کورونا کا پھیلاؤ بڑھا تو ہمارا نظام صحت بیٹھ جائے گا۔ پاکستان بھی کورونا سے بری طرح متاثر ہوا ہے۔

پی پی چیئر مین کا کہنا تھا کہ ہم لاک ڈاؤن اورسماجی دوری کے ذریعے ہی اس وبا سے بچ سکتے ہیں، ہمارا نظام صحت اتنا وسیع نہیں کہ اس وبا کا مقابلہ کرسکے، اٹلی اوربرطانیہ کا نظام صحت بھی کورونا کے پھیلاؤ کی وجہ سےبیٹھ گیا ہے۔

بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ غریب ممالک کے پاس اتنے وسائل نہیں کہ وہ کورونا کا مقابلہ کرسکیں۔ امیر ممالک کو کم وسائل والے ملکوں کی مدد کرنا ہوگی۔ کورونا کی وبا سے باہمی عالمی تعاون سے ہی نجات حاصل کی جاسکتی ہے۔ وسائل والے ممالک کوصحت کی سہولیات کی دنیا بھرمیں منصفانہ تقسیم کرنا ہوگی۔

انٹرویو کے دوران ان کا مزید کہنا تھا کہ بین الاقوامی برادری کو اپنا روّیہ بدلنا ہو گا، مقبوضہ کشمیرمیں لاک ڈاؤن ہے اورلوگوں کے پاس کوئی سہولت نہیں، بھارت اب تک مقبوضہ وادی کو بند کیے بیٹھا ہے۔

بات کو آگے بڑھاتے ہوئے پی پی چیئر مین کا کہنا تھا کہ آج بھی ایران پرپابندیاں ہیں جہاں لوگ کورونا وائرس کی وجہ سے مر رہے ہیں۔