صحافی حملہ کیس میں سینیٹر فیصل جاوید خان کی عبوری ضمانت منظور

صحافی حملہ کیس میں سینیٹر فیصل جاوید خان کی عبوری ضمانت منظور

اسلام آباد: ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد نے صحافیوں پر مبینہ حملہ کیس میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) سینیٹر فیصل جاوید کی عبوری ضمانت منظور کر لی ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد میں پی ٹی آئی سینیٹر فیصل جاوید خان کیخلاف تھانہ بنی گالا میں درج صحافی پر حملہ کیس کی سماعت ہوئی اور عدالت نے 10 ہزار روپے کے مچلکوں کے عوض ان کی عبوری ضمانت منظور کر لی۔ 

عدالت نے پولیس کو 17 اگست تک فیصل جاوید کی گرفتاری سے روک دیا اور تفتیشی افسر کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 17 اگست کو جواب طلب کرلیا ہے۔ 

ضمانت منظوری کے بعد فیصل جاوید خان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میں نے کوئی غلط کام نہیں کیا اور مجھ پر ایک انتہائی بوگس اور جھوٹا مقدمہ بنایا گیا ہے، ایسا مقدمہ مضحکہ خیز ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم نے کبھی خود کو قانون سے بالاتر نہیں سمجھا اور پی ٹی آئی نے ہمیشہ قانون کی پاسداری کی، المیہ یہ ہے کہ ملک میں کرپٹ اور مجرم افراد بڑے عہدوں پر مسلط ہو چکے ہیں۔ 

پی ٹی آئی رہنما نے کہا کہ 13 اگست کو ہاکی سٹیڈیم لاہور میں پاکستان کی تاریخ کا سب سے بڑا جلسہ ہونے جا رہا ہے اور عمران خان نے تمام پاکستانیوں کو لاہور جلسے میں شرکت کی دعوت دی ہے۔ 

مصنف کے بارے میں