زینب کے قاتل کی شناخت کرنے والے کیلئے ایک کروڑ روپے کا اعلان

لاہور: ماڈل ٹاؤن لاہور میں وزیر اعلیٰ پنجاب شہبازشریف کی زیر صدرات اعلیٰ سطح کا اجلاس ہوا جس میں قصور واقعے اور امن و امان کی حالیہ صورت حال پر غور کیا گیا۔ وزیر اعلی پنجاب نے زینب کے قاتل کے شناخت کرنے والے کے لئے ایک کروڑ روپے کا اعلان کردیا۔ قاتل کو زندہ یا مردہ گرفتار کرنے والے کے لئے بھی ایک کروڑ روپے کا اعلان کیا گیا۔

پولیس فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے افراد کے گھر والوں کو 30، 30 لاکھ روپے اور دونوں کے اہل خانہ سے ایک ایک فرد کو پولیس کی نوکری دی جائے گی۔

ادھر بچی سے زیادتی کے ملزم کا پولیس کی جانب سے جاری کیا گیا خاکہ بھی غلط نکلا کیوں کہ خاکہ ویڈیو میں نظر آنے والے شخص سے مشابہت نہیں رکھتا۔ ذرائع کے مطابق خاکہ جلد بازی میں اہل علاقہ کی معلومات کی بنیاد پر بنایا گیا تھا۔

بچی کے لواحقین نے بھی سی سی ٹی وی فوٹیج فراہم کی۔ سی سی ٹی وی فوٹیج میں بچی کو ملزم کے ساتھ جاتے ہوئے دیکھا گیا۔

 

سی سی ٹی وی فوٹیج میں بچی کو ملزم کے ساتھ جاتے ہوئے دیکھا گیا!

 

یاد رہے کہ چھ روز قبل قصور کی رہائشی 7 سالہ زینب اپنے گھر سے ٹیوشن پڑھنے گئی تھی جہاں سے اسے اغوا کر لیا گیا تھا جس کے بعد گزشتہ روز پولیس کو زینب کی لاش شہباز خان روڈ پر کچرے کے ڈھیر سے ملی تھی جسے زیادتی کے بعد قتل کر دیا گیا تھا۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں