پورے چہرےکے نقاب پر لگائی جانے والی پابندی کے حق میں فیصلہ دے دیا

پورے چہرےکے نقاب پر لگائی جانے والی پابندی کے حق میں فیصلہ دے دیا

برسلز :  یورپی عدالت برائے انسانی حقوق نے بیلجیئم حکومت کی جانب سے عوامی مقامات پر پورے چہرے کا نقاب لینے پر لگائی جانے والی پابندی کے حق میں فیصلہ دے دیا ہے۔


عدالتی فیصلے کے مطابق اس پابندی کا مقصد معاشرتی میل ملاپ کو یقینی بنانے، حقوق اور دیگر افراد کی آزادی کا تحفظ تھا اور یہ کہ یہ پابندی ایک جمہوری معاشرے کے لیے ضروری ہے۔

واضح رہے کہ بیلجیئم نے پورے چہرے کا نقاب لینے پر جون 2011ء میں پابندی عائد کی تھی۔ اس پابندی کے خلاف درخواست ایک بیلجیئن مسلم خاتون اور ایک مراکشی مسلم خاتون کی طرف سے یورپی عدالت میں دائر کی گئی تھی۔

نیوویب ڈیسک< News Source