سعودی عرب میں مردانہ کمزوری کا سب سے موثر علاج دریافت۔

نیویارک: مردانہ قوت میں اضافے کی گولی ویاگرا بے شمار سائیڈ ایفیکٹس کے باوجود گزشتہ 20سال سے دنیا بھر میں عام استعمال کی جا رہی ہے ۔ اب تک ہزاروں لوگ اس کے باعث اپنے گردوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ اب سائنسدان اس کا ایک ایسا متبادل تیار کرنے جا رہے ہیں جونہ صرف ان مضراثرات سے پاک ہو گا بلکہ ویاگرا سے کئی گنا زیادہ طاقتور بھی ہو گا۔

برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق ویاگرا کے برعکس یہ دوا کھانے کی نہیں بلکہ یہ جلد کے ذریعے جسم میں داخل کی جائے گی اور چند منٹ میں ہی اپنا اثر دکھانا شروع کر دے گی جو 10گھنٹے تک جسم میں موجود رہے گا، اس کے برعکس ویاگرا کا اثر کھانے کے 30منٹ بعد شروع ہوتا ہے اور نسبتاً جلد ختم ہو جاتا ہے، جبکہ ہر تین میں سے ایک مرد پر ویاگرا کا کوئی اثر ہی نہیں ہوتا۔اس نئی دوا کا نام ویاگرا پلاسٹر(Viagra Plaster)ہے۔

خریدار کو ایک ننھی سی پٹی دی جائے گی جسے وہ اپنے بازو یا پیٹ پر لگائے گا۔ اس پٹی کے ذریعے دوا اس کے جسم میں داخل ہو گی۔ اس طرح دوا ہضم ہونے سے پیدا ہونے والے سردرد، دردشقیقہ، بدہضمی اور پٹھوں کے درد جیسے مسائل سے بھی چھٹکارہ ملے گا جو ویاگرا کو کھانے سے پیش آتے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق ویاگرا کا یہ متبادل سعودی عرب کی شاہ عبدالعزیز یونیورسٹی اور مصر کی قاہرہ یونیورسٹی کے ماہرین مشترکہ طور پر تیار کر رہے ہیں، جنہوں نے اس کے ابتدائی تجربات چوہوں پر کیے، جو کامیاب رہے۔