فرانس :اسٹراس برگ میں کرسمس بازار میں فائرنگ سے 3افرادہلاک،10زخمی

فرانس :اسٹراس برگ میں کرسمس بازار میں فائرنگ سے 3افرادہلاک،10زخمی
کیپشن: فوٹؤ ٹویٹر اکاؤنٹ ہیش ٹیگ ۔۔۔ سٹراس برگ۔۔۔۔۔ فائرنگ کے واقعے کے بعد اسٹراس برگ میں یورپی پارلیمنٹ کی عمارت بھی بند کر دی گئی ہے

فرانس: فرانس کے شہر اسٹراس برگ میں کرسمس بازار میں فائرنگ سے 3افرادہلاک اور 10زخمی ہو گئے۔

تفصیلات کے مطابق فرانس کے شہر اسٹراس برگ میں کرسمس بازار میں مسلح شخص نے فائرنگ کرکے متعدد افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا ،فائرنگ کی اطلاع ملتے ہی    پولیس نے علاقےکوگھیرے میں لےلیا، قریبی دکانیں اور ریستوران بند کردیے گئے۔

فرانسیسی پولیس کا کہنا ہے کہ مسلح شخص فرار ہوگیا، جس کی تلاش جاری ہے۔دوسری جانب فرانسیسی وزیر داخلہ نے شہریوں کو اپنے گھروں میں رہنے کی ہدایت کی ہے،جبکہاسٹراسبرگ میں یورپی پارلیمنٹ کی عمارت بند کردی گئی جس کے باعث ارکان پارلیمنٹ، عملہ اور صحافی عمارت میں محصور ہوکر رہ گئے۔

فائرنگ سے علاقے میں بھگدڑ مچ گئی،پولیس نے واقعے کو دہشت گردی قراردیدیا۔ بین الااقوامی خبر رساں ایجنسی کے مطابق 29سالہ ملزم فرانس اور جرمنی میں قید کاٹ چکا ہے،گزشتہ روزپولیس نےملزم کوتفتیش کےبعدچھوڑدیاتھا۔دوسری جانب فرانسیسی وزیر داخلہ نے شہریوں کو اپنے گھروں میں رہنے کی ہدایت کی ہے،فائرنگ کے واقعے سے سکیورٹی خدشات بڑھ گئے ہیں ،، اسٹرا س برگ میں آج اسکول بندرہیں گے۔

فرانسسی وزارت ِ داخلہ کے مطابق ملزم کی شاخت چیرف کے نام سے ہو گئی ہے ۔اور اس کا نام انسداد دہشت گردی سیل کو بھجوا دیا گیا ہے ۔ فائرنگ کرنے والا شخص 29سالہ چیرف پہلے بھی کریمنل ریکارڈ رکھتاہے ۔ اور فرانس پولیس کے پاس اس کے متعلق مجرمانہ کارروائیوں کا کافی ریکارڈ موجود ہے ۔

فائرنگ کے واقعے کے بعد اسٹراس برگ میں یورپی پارلیمنٹ کی عمارت بھی بند کر دی گئی ہے ۔ واضح رہے کہ آج سٹراس برگ یورپین پارلیمنٹ میں یورپ کے سب سے بڑے ایوارڈ کی تقریب بھی ہے ۔