کراچی میں تجاوزات کیخلاف آپریشن جاری رکھنے کا حکم

کراچی میں تجاوزات کیخلاف آپریشن جاری رکھنے کا حکم
رفاہی پلاٹوں پر قائم گھروں اور مارکیٹوں کو 15 دن کے بجائے 45 دن کا پیشگی نوٹس دیا جائے، چیف جسٹس۔۔۔۔۔فائل فوٹو

کراچی: چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں لارجر بینچ سپریم کورٹ کراچی رجسٹری تجاوزات سے متعلق کیس کی سماعت کر رہا ہے۔اس موقع پر عدالت کے حکم پر وفاقی و صوبائی حکومت اور میئر کراچی نے تجاوزات کے خاتمے سے متعلق رپورٹ پیش کی جس میں وفاقی، صوبائی اور شہری حکومت نے تجاوزات کے خلاف آپریشن جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔


عدالت نے تجاوزات کیخلاف آپریشن جاری رکھنے کا حکم دیا جب کہ چیف جسٹس نے کہا کہ رفاہی پلاٹوں پر قائم گھروں اور مارکیٹوں کو 15 دن کے بجائے 45 دن کا پیشگی نوٹس دیا جائے۔

سپریم کورٹ نے گزشتہ روز گھروں اور کاروباری جگہوں پر آپریشن فی الحال روکنے کا حکم دیتے ہوئے وفاقی، صوبائی اور شہری حکومت سے مشترکہ لائحہ عمل طلب کیا تھا۔

چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا تھا کہ میئر کراچی وسیم اختر اپنا سیاسی مستقبل داؤ پر لگا کر کام کر رہے ہیں اور وہ اپنے ووٹرز کے سامنے کھڑے ہیں۔ اب وفاقی حکومت بھی سامنے آ گئی ہے جبکہ ہم اس ملک میں قانون کے حکمرانی چاہتے ہیں اگر کوئی پلان ہے تو مل کر بنا لیں۔