ٹرمپ کی ویڈیو چھپانے کیلئے روسی ہیکر کو 10لاکھ ڈالر دیئے، رپورٹ

ٹرمپ کی ویڈیو چھپانے کیلئے روسی ہیکر کو 10لاکھ ڈالر دیئے، رپورٹ

نیو یارک: امریکی اخبار نیو یارک ٹائمز نے اپنی رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ ہیکنگ کے دوران چوری ہونے والے اس پروگرام کی مدد سے روسی ہیکر نے سی آئی اے کے قبضے سے ایسی حساس معلومات بھی چوری کی تھیں جن میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو شرمندگی سے دوچار کرنے والا مواد بھی شامل ہے۔


اخباری رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سی آئی اے روسی شہری جس کی شناخت ظاہر نہیں کی گئی سے چوری کیے گئے سافٹ ویئر اور دیگر مواد کو ان کی تشہیر سے قبل واپس لانے کی کوشش کر رہی ہے۔ اس مقصد کے لیے امریکی خفیہ ایجنسی نے مذکورہ شخص کو ایک ملین ڈالر کی رقم ادا کرنے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔ اس میں سے ایک لاکھ ڈالر کی رقم اسے دی جا چکی ہے۔

دوسری جانب سی آئی اے کے ترجمان ڈین بویڈ نے نیو یارک ٹائمز کی خبر کو خیالی اور فرضی کہانی قرار دیا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ کسی روسی ہیکر کو ایک لاکھ ڈالر کی رقم ادا نہیں کی گئی۔

واضح رہے کہ رپورٹ کے مطابق سی آئی اے کی جانب سے ڈیزائن کیے گئے اس طرح کے سافٹ ویئر کو گذشتہ برس آن لائن معلومات کی چوری اور کمپیوٹر سسٹم کو ہیک کرنے کے لیے استعمال کیا گیا تھا۔ تاہم یہ پروگرام ایک روسی ہیکر کے ہاتھ لگ گیا جس کی مدد سے خود ’سی آئی اے‘ کے پاس موجود حساس معلومات چوری ہوگئی تھیں۔ روسی ہیکرنے بعد ازاں وہ سافٹ ویئر فروخت کرنے کی کوشش کی تو اس کے خریداروں میں سی آئی اے بھی شامل ہوگیا۔

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں