یورپی یونین نے ہمارا وقت ضائع کیا ہے،طیب اردوان

یورپی یونین نے ہمارا وقت ضائع کیا ہے،طیب اردوان

انقرہ :ترک صدر طیب رجب اردوان نے بین الاقوامی میڈیا سے بات کرتے ہوئے اگر یورپی یونین کا یہ کہنا تھا کہ وہ ترکی کو ایک رکن کے طور قبول نہیں کر سکتی تو یہ بات ترکی کے لیے فکر کرنے والی نہیں ہے


ان کا کہنا تھا کہ ترکی اپنے پاوں پر کھڑا ہونے کے قابل ہے۔ترک صدر نے اس بات کی تردید کی کہ ترکی میں 150 صحافیوں کو جیل میں رکھا گیا ہے۔

ان کا دعویٰ ایک ایسے وقت سامنے آیا ہے جب ترکی نے انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ایمنیسٹی انٹرنیشنل کی مقامی ڈائریکٹر اور نو دیگر افراد کی حراست میں توسیع کی ہے۔واضح رہے کہ ایمنیسٹی انٹرنیشنل کی ڈائریکٹر عادل ایسر کو پانچ جولائی کو ڈیجیٹل سکیورٹی اینڈ انفارمیشن مینیجمنٹ ورکشاپ کے دوران انسانی حقوق کے لیے کام کرنے والے سات کارکنوں اور دو غیر ملکی ٹرینرز کے ہمراہ حراست میں لیا گیا تھا۔

اس تشویش نے ترکی کی یورپی یونین کی رکنیت حاصل کرنے کی کوشش کو خراب کیا ہے تاہم رجب طیب اردوان نے یورپی یونین پر ترکی کا وقت ضائع کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔ترک صدر کہنا تھا کہ ترکی کی اکثریت 'اب یورپی یونین میں شمولیت نہیں چاہتی، اور انھیں یقین ہے 'یورپی یونین کی ترکی کے حوالے سوچ اچھی نہیں ہے جس کی ہمیں کوئی فکر نہیں ہے