چھاتی کا کینسر روکنے کیلئے سرخ مرچ استعمال کرنیکا مشورہ

لاہور: ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ سرخ مرچ چھاتی کے کینسر کو روکنے میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔ یونیورسٹی آف بون کے ماہرین کی جینیاتی تحقیق سے چھاتی کے کینسر کی کئی اقسام منظر عام پرآئی ہیں جنہیں تین ریسپٹرز کی موجودگی یا عدم موجودگی کی بنا پر تقسیم کیا جاتا ہے اور انہیں ایسٹروجن، پروجیسٹیرون اور ایپی ڈرمل گروتھ فیکٹر ریسپٹر ٹو ن یا ایچ ای آر ٹوو¿ کا نام دیا گیا ہے۔

چھاتی کا کینسر روکنے کیلئے سرخ مرچ استعمال کرنیکا مشورہ

لاہور: ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ سرخ مرچ چھاتی کے کینسر کو روکنے میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔ یونیورسٹی آف بون کے ماہرین کی جینیاتی تحقیق سے چھاتی کے کینسر کی کئی اقسام منظر عام پرآئی ہیں جنہیں تین ریسپٹرز کی موجودگی یا عدم موجودگی کی بنا پر تقسیم کیا جاتا ہے اور انہیں ایسٹروجن، پروجیسٹیرون اور ایپی ڈرمل گروتھ فیکٹر ریسپٹر ٹو ن یا ایچ ای آر ٹوو¿ کا نام دیا گیا ہے۔


ماہرین کے مطابق ایچ ای آر ٹو پوزیٹو کا بریسٹ کینسر علاج میں آسان ہے اور اس میں دوا بھی اثر کرتی ہے لیکن اگر ایچ ای آر ٹو نگیٹو ہو تو اس کا علاج مشکل ہوتا ہے اور اسے ہی ٹرپل نیگیٹو بریسٹ کینسر کہا جاتا ہے۔ اس کا علاج کیمو تھراپی سے ہی ممکن ہے اور بہت مشکل ہوتا ہے۔ ماہرین نے کہا ہے کہ سرخ مرچوں میں موجود کیپسیسن مرکب اس قسم کے سرطان کو بڑھنے سے روکتا ہے۔ ماہرین پر امید ہیں کہ مزید تحقیق کے بعد سخت جان بریسٹ کینسر کے علاج کی راہ کھلے گی۔