سعودی شہزادوں کی گرفتاری کا منصوبہ پہلے سے بن چکا ہے،برطانوی اخبار کا دعوی

سعودی شہزادوں کی گرفتاری کا منصوبہ پہلے سے بن چکا ہے،برطانوی اخبار کا دعوی

لاہور:سعودی شہزادوں کی گرفتاری کا منصوبہ پہلے سے بن چکا ہے،تفصیلا ت کے مطابق برطانوی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ کرپشن کے الزامات پر سعودی عرب میں امراءکو قید کرنے کا انتظام پہلے ہی ہوگیا تھا۔سعودی عرب میں کرپشن کے خاتمے کے لیے تاریخی کریک ڈاو¿ن کو ایک ہفتہ گزر چکا ہے جس میں گیارہ شہزادوں سمیت 200 سے زائد افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔


تاہم برطانوی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ بااثر افراد کے خلاف ہونے والے اس اچانک آپریشن کے لئے انتظامات پہلے ہی کرلئے گئے تھے۔اخبار نے دعویٰ کیا کہ سب جیل قرار دیا گیا فائیو اسٹار ہوٹل گرفتاریوں سے قبل ہی خالی کرا لیا گیا تھا۔کرپشن میں گرفتار شہزادوں، وزراءاور دیگر کو عدالتی کارروائی کا سامنا کرنا پڑے گا۔

اخبار کے مطابق زیر حراست افراد کی گھر والوں سے صرف ایک بار فون پر بات کرائی گئی جب کہ سب جیل قرار دیے گئے ہوٹل میں غیر متعلقہ افراد کا داخلہ بھی بند ہے۔بااثر افراد کو جہازوں اور گاڑیوں کے ذریعے ہوٹل منتقل کیا گیا۔برطانوی اخبار کے اس دعوے پر شاہی حکام کی جانب سے فوری تبصرہ سامنے نہیں آسکا۔

اخبار کے مطابق اس سلسلے میں ہوٹل انتظامیہ نے مہمانوں کو خط بھی لکھا تھا جس میں ایک غیر متوقع اور ہنگامی بکنگ کا تذکرہ کیا گیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق گرفتار شہزادوں اور اہم افراد میں سے بعض کو میٹنگ کا کہہ کر حراست میں لیا گیا جب کہ مختلف شہروں سے پکڑے گئے ۔