ہوم ورک مکمل کرکے رکھنا چاہیے تھا، عمران خان وزیر خزانہ کی پالیسیوں پر برہم

ہوم ورک مکمل کرکے رکھنا چاہیے تھا، عمران خان وزیر خزانہ کی پالیسیوں پر برہم

فوٹو فائل

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کی معاشی پالیسی پر عدم اطمینان کا اظہار کرتےہوئے ان کی کارکردگی پر بھی برہمی کا اظہار کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت چند پارٹی رہنماؤں کا غیر رسمی اجلاس ہوا جس میں وزیراعظم نے وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کی معاشی پالیسیوں پر عدم اطمینان کا اظہار کیا۔وزیراعظم نے اسد عمر کی کارکردگی پر بھی برہمی کا اظہار کیا اور کہا کہ وزیر خزانہ کو اقتصادی صورتحال پر پیشگی منصوبہ بندی کرنی چاہیے تھی، آئی ایم ایف سے رجوع کرنے میں پس و پیش کی پالیسی سے نقصان ہوا۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان کاکہنا تھا کہ اسد عمر کو ہوم ورک مکمل کرکے رکھنا چاہیے تھا، ٹھوس منصوبہ بندی نہ ہونے سےعوامی رد عمل کا سامنا بھی کرنا پڑا۔ذرائع نے بتایا کہ وزیراعظم نے موجودہ اقتصادی صورتحال پر قوم کو اعتماد میں لینے کا فیصلہ کیا ہے جس کے لیے وہ قوم سے خطاب کریں گے اور انہیں روشن مستقبل کی نوید بھی سنائیں گے۔

ذرائع کےمطابق وزیراعظم قوم کو بتائیں گے کہ موجودہ حکومت معاشی بحران پر قابو پانے کی صلاحیت رکھتی ہے اور ملک کو بحران سے نکالا جائے گا۔