با اختیار خواتین کے کردادر کرنا پسند ہے :ودیا بالن

با اختیار خواتین کے کردادر کرنا پسند ہے :ودیا بالن

ممبئی: ہندی سینما کے آغاز میں یہ تصور عام تھا کہ وہی فلمیں کامیاب ہوتی ہیں جن میں ہیرو اور ہیروئن دونوں کی موجودگی ہو اور کسی ایک کے بغیر بھی فلم کامیاب نہیں ہوسکتی یا اس میں کچھ کمی رہتی ہے لیکن اب یہ تاثر بالکل غلط ثابت ہو چکا ہے اور ایسی فلمیں بھی بن رہی ہیں جن میں مرکزی کردار صرف خواتین کا ہی ہوتا ہے اور با اختیار خواتین کو ہی دکھایا جاتا ہے ۔


بولی وڈ اداکارہ ودیا بالن ہمیشہ ہی ایسی فلموں میں کام کرتی ہیں جن میں خواتین کو بااختیار بنانے کا پیغام دیا جاتا ہے اور ان کی جلد ریلیز ہونے والی فلم 'بیگم جان' بھی اس سے خاصی مختلف نہیں۔

ایک انٹرویو میں بات کرتے ہوئے ودیا بالن کا فلم 'بیگم جان' میں اپنے کردار کے حوالے سے کہنا تھا کہ یہ اب تک کا ان کے کیریئر کا سب سے مضبوط کردار ہوگا۔

ودیا بالن کے مطابق 'مجھے بہادر ہونے کے بارے میں تو نہیں معلوم، لیکن یہ میرا اب تک کا سب سے مضبوط کردار ہے، میں نے اس سے قبل بھی کئی اہم کردار ادا کیے لیکن یہ ان سب میں سب سے طاقتور ہے، مجھے لگتا ہے میں نے ایسا کردار اسکرین پر اب تک نہیں دیکھا' مجھے با اختیار خواتین کے کردار کرنا پسند ہے ۔

تاہم ودیا بالن کا یہ بھی کہنا تھا کہ جو کردار وہ ادا کرتی ہیں وہ کسی کے لیے نہیں بلکہ ان کے لیے رول ماڈل ہیں۔فلم 'بیگم جان' کی کہانی پاکستان اور ہندوستان کی سرحد کے درمیان بنے ایک کوٹھے کی ہے، جسے سرحد کی لکیر کھینچے جانے کے باعث تباہ کرنا پڑا اور اس دوران بیگم جان نے اپنے کوٹھے کے لیے جنگ کی.

فلم رواں ماہ 14 تاریخ کو سینما گھروں میں نمائش کے لیے پیش کی جائے گی.