قبائلی خواتین نے محکمہ جنگلات کے افسران کو تشددکے بعد درخت سے باندھ دیا

قبائلی خواتین نے محکمہ جنگلات کے افسران کو تشددکے بعد درخت سے باندھ دیا
سورس:   file photo

نئی دہلی ،قبائلی خواتین نے محکمہ جنگلات کے افسر کو ناروا سلوک پرتشددکے بعد درخت سے باندھ دیا ۔

بھارت میں قبائلی خواتین نے محکمہ جنگلات کے اہلکار کے ساتھ انسانیت سوز سلوک کرتے ہوئے تشددکے بعد درخت سے باندھ دیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق  یہ واقعہ ضلع بھدرا دری کوتہ گوڑم کے چنتہ گوپا گاؤں میں پیش آیا جہاں محکمہ جنگلات کے کچھ اہلکار ایک جنگل کی اراضی پر قبضہ خالی کرانے گئے کرنے گئے یہ قبائلی وہاں پر دھان کی کاشت کررہے تھے, اسی مقام پر جنگل کی حفاظت کے لئے تقریبا 25 ایکٹر رقبے  پر خندق کی کھدائی کا کام جاری ہے۔

مقامی حکام نے قبائلیوں کو فوری طور زمین خالی کرنے کا حکم دیا اور کہا کہ یہ زمین محکمہ جنگلات کی ملکیت ہے لہٰذا اس میں کسی قسم کی کاشت یا پیداوار کرنا اور داخل ہونا بھی غیر قانونی ہے۔

یہ بات سن کر قبائلی افراد میں غم و غصہ پھیل گیا اور وہاں موجود قبائلی خواتین کی بڑی تعداد نے مل کر جنگلات کے تین عہدیداروں پر حملہ کردیا۔

محکمہ جنگلات کے تینوں اہلکار ان کے سامنے بے بس ہوگئے اور وہاں سے بھاگنے میں ہی عافیت جانی لیکن بد قسمتی سے ایک اہلکار ان خواتین کے ہتھے چڑھ گیا جسے انہوں نے درخت سے باندھ دیا۔

واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ہے جس کے بعد اعلیٰ افسران کے حکم پر مقدمہ درج کرلیا گیا، واقعے کی مزید تحقیقات کے بعد افسر پر حملے میں ملوث افراد کی شناخت کے بعد کارروائی کی جائے گی۔