لاہور : دنیا بھر میں شہرت پانے والی پاکستان کی معروف قانون دان اور انسانی حقوق کی علمبردار عاصمہ جہانگیر کی میت کو گلبرگ میں واقع ان کی رہائش گاہ سے قذافی سٹیڈیم پہنچایا گیا جہاں ان کی نمازِ جنازہ ادا کر دی گئی ہے ۔

تفصیلات  کے مطابق عاصمہ جہانگیر کا نماز جنازہ قذافی سٹیڈیم میں واقع ایل سی سی گراﺅنڈ میں جماعت اسلامی کے بانی سید ابولاعلیٰ مودودی کے فرزند حیدر فاروق مودودی نے پڑھائی ۔اس موقع پر بڑی تعداد میں سول سوسائٹی کے نمائندے ،سیاستدان ،صحافی ،قانون دان اور مختلف طبقات سے تعلق رکھنے والے افرادنے شرکت کی مرحومہ کے جسد خاکی کو فول پروف سیکیورٹی کے ساتھ لا یا گیا ۔

قذافی سٹیڈیم میں نماز جنازہ کی ادائیگی کے بعد عاصمہ جہانگیر کی میت کو تدفین کے لیے سیکیورٹی کے ہمراہ بیدیاں روڈ پر واقع ان کے فارم ہاؤس لے جا یا جا ئے گا ۔ عاصمہ جہانگیر کو ان کے فارم ہاؤس میں ہی دفنایا جائے گا ۔
واضح رہے کہ عاصمہ جہانگیر دو روز قبل 66 برس کی عمر میں دل کا دورہ پڑنے کے باعث انتقال کر گئیں تھیں۔