دوسرا ٹی 20، پاکستان کو چھ وکٹوں سے شکست، سیریز 1-1 سے برابر

دوسرا ٹی 20، پاکستان کو چھ وکٹوں سے شکست، سیریز 1-1 سے برابر
کیپشن:   دوسرا ٹی 20، پاکستان کو چھ وکٹوں سے شکست، سیریز 1-1 سے برابر سورس:   فوٹو/بشکریہ پی سی بی

لاہور: پاکستان اور جنوبی افریقہ کے مابین دوسرے ٹی 20 میچ میں پروٹیز  نے گرین شرٹس کو 6 وکٹوں سے شکست دے کر تین میچز کی سیریز 1-1 سے برابر کر دی ہے، مہمان ٹیم کے ریزا ہینڈرکس اور پیٹے وین بلیون نے جارحانہ اور عمدہ بلے بازی کرتے ہوئے ٹیم کی جیت میں کلیدی کردار ادا کیا۔ 

تفصیلات کے مطابق قذافی سٹیڈیم لاہور میں کھیلے گئے میچ میں پروٹیز نے 145  رنز کا ہدف سترہویں ویں اوور میں چار وکٹوں کے نقصان پر ہی حاصل کر لیا۔ پروٹیز کی جانب سے جانیمن ملان اور ریزا ہینڈرکس نے اننگز کا آغاز کیا تو فاسٹ بائولر شاہین شاہ آفریدی نے اننگز کی دوسری گیند پر ہی انہیں کلین بولڈ کر کے پاکستان کو پہلی کامیابی دلا دی، وہ صرف چار رنز بنا سکے۔ 21 کے مجموعی سکور پر  شاہین آفریدی نے ہی گرین شرٹس کو دوسری کامیابی بھی دلائی اور جے سمٹس کو محض 12 کے مجموعی سکور پر بابراعظم کے ہاتھوں کیچ کروا دیا۔ 

مہمان ٹیم کی دو وکٹیں گرنے کے بعد ریزا ہینڈرکس اور پیٹے وین بلیون نے پاکستانی بائولرز کو آڑے ہاتھوں لیا اور تیسری وکٹ کی شراکت میں 71 رنز  جوڑ کر ٹیم کی پوزیشن مضبوط کر دی۔ میچ کے نوویں اوور میں پیٹے وین بلیون عثمان قادر کی گیند کو کریز سے باہر نکل کر کھیلنے کی کوشش میں سٹمپ آئوٹ ہوئے مگر بائولر کا پیر لائن سے باہر ہونے کے باعث اسے نو بال قرار دیدیا گیا اور یوں انہیں نئی زندگی مل گئی تاہم 98 کے مجموعی سکور پر وہ بالآخر عثمان قادر کا ہی شکار بنے اور 30 گیندوں پر تین چھکوں اور تین چوکوں کی مدد سے 42 رنز بنا کر افتخار احمد کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔ 

قومی ٹیم کے آل رائونڈر محمد نواز نے 105 کے مجموعی سکور  پر سیٹ بلے باز پیٹے وین بلیون کو آئوٹ کر کے پاکستان کو اہم کامیابی دلائی، وہ 32 گیندوں پر دو چھکوں اور تین چوکوں کی مدد سے 42 رنز بنانے میں کامیاب ہوئے اور محمد نواز نے اپنی ہی گیند پر ان کا کیچ لیا تاہم وہ پروٹیز کی فتح کی بنیاد رکھ چکے تھے۔ تجربہ کار بلے باز ڈیوڈ ملر نے 25  اور ہینرچ کلاسن نے 17 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیل کر ٹیم کو فتح سے ہمکنار کروا دیا۔ 

پاکستان کی جانب سے شاہین شاہ آفریدی سب سے کامیاب بائولر رہے جنہوں نے تین اوورز میں 18 رنز کے عوض دو کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی جبکہ محمد نواز اور عثمان قادر ایک، ایک وکٹ حاصل کرنے میں کامیاب ہو سکے۔ 

قبل ازیں جنوبی افریقہ نے ٹاس جیت کر پاکستان کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی تو پوری ٹیم مقررہ 20 اوورز میں سات وکٹوں کے نقصان پر 144 رنز بنا سکی۔پاکستان کی جانب سے بابراعظم اور محمد رضوان نے اننگز کا آغاز کیا مگر قومی ٹیم کے کپتان گزشتہ میچ کی طرح آج بھی ناکام ہوئے اور 10 کے مجموعی سکور پر پانچ نز بنا کر پریٹوریس کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہو گئے۔ 

 پہلی وکٹ گرنے کے بعد  حیدر علی اور محمد رضوان نے دوسری وکٹ کی شراکت میں 26 رنز جوڑے تاہم اس موقع پر حیدر علی کی اننگز کا خاتمہ بھی ہو گیا جو 10 رنز بنا کر اینڈیل فیلوک وائیو کی گیند پر سیپاملا کے ہاتھوں کیچ ہو گئے۔ قومی ٹیم کو تیسرا نقصان 48 کے مجموعی سکور پر اس وقت اٹھانا پڑا جب حسین طلعت صرف تین رنز بنا کر تبریز شمسی کی گیند پر پیٹے وین بیلون کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

آل رائونڈر افتخار احمد بھی صرف 20 رنز کے مہمان ثابت ہوئے اور 93 کے مجموعی سکور پر ڈوین پریٹوریس کی گیند پر ڈیوڈ ملر کے ہاتھوں کیچ ہو گئے۔ پہلے ٹی 20 میچ میں عمدہ سنچری سکور کرنے والے محمد رضوان آج بھی سب سے زیادہ رنز بنانے میں کامیاب رہے اور 51 رنز بنا کر ڈوین پریٹوریس کی گیند پر فیلوک وائیو کے ہاتھوں کیچ ہو گئے۔  126 کے مجموعی سکور پر خوشدل شاہ بھی ڈوین پریٹوریس کا شکار بن گئے اور 15 کے انفرادی سکور پر ہینرچ کلاسن نے انہیں کیچ کیا۔ آل رائونڈر فہیم اشرف 12 گیندوں پر 30 اور عثمان قادر چار رنز بنا کر ناقابل شکست رہے۔ 

 جنوبی افریقہ کی جانب سے تمام بائولرز نے ہی نپی تلی بائولنگ کا مظاہرہ کیا تاہم ڈوین پریٹوریس سب سے کامیاب بائولر ثابت ہوئے جنہوں نے چار اوورز میں 17 رنز کے عوض پانچ کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی جبکہ اینڈیل فیلوک وائیو اور تبریز شمسی ایک، ایک وکٹ حاصل کرنے میں کامیاب رہے۔ 

واضح رہے کہ میچ کیلئے قومی ٹیم کی قیادت بابراعظم نے کی جبکہ دیگر کھلاڑیوں میں محمد رضوان، حیدر علی، حسنین طلعت، افتخا راحمد، خوشدل شاہ، فہیم اشرف، محمد نواز، عثمان قادر، شاہین شاہ آفریدی اور حارث رئوف شامل ہیں۔ 

 جنوبی افریقہ ٹیم کی قیادت ہینرچ کلاسن نے کی جبکہ دیگر کھلاڑیوں میں جانیمن ملان، ریزا ہینڈرکس، جے سمٹس، ڈیوڈ ملر، پیٹے وین بیلون، اینڈیل فیلوک وائیو، ڈوین پریٹوریس، گلینٹن سٹورمن، لوتھو سیپاملا اور تبریز شمسی شامل ہیں۔ 

بشکریہ(نئی بات)