وطن واپس آنا چاہتا ہوں ، مکمل تحفظ دیا جائے،پرویزمشرف

اسلام آباد:انسداد دہشت گردی کی عدالت نے پرویز مشرف کی وطن واپسی کے لیے فول پروف سیکیورٹی فراہم کرنے کی درخواست منظور کرلی،ججز نظر بندی کیس کے سماعت کے دوران عدالت نے قرار دیا کہ پرویز مشرف 9 فروری کو پیش نہ ہوئے تو انہیں اشتہاری قرار دے دیا جائے گا۔
اسلام آباد انسداد دہشت گردی کی عدالت میں ججز نظر بندی کیس کی سماعت ہوئی،سابق صدر پرویز مشرف کے وکیل کی جانب سے اپنے موکل کی سکیورٹی کے لیے درخواست دائر کی گئی،درخواست میں کہا گیا کہ پرویز مشرف وطن واپس آنا چاہتے ہیں، ان کی سیکورٹی کے لیے انتظامات مکمل کئے جائیں۔ عدالت نے پرویز مشرف کی وطن واپسی پر فول پروف سیکورٹی دینے کی درخواست منظور کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر سیکرٹری داخلہ اور آئی جی اسلام آباد کو سیکورٹی یقینی بنانے کا حکم دےدیا۔ عدالت کے روبرو پراسیکیوٹر کا کہنا تھا کہ وزارت داخلہ پہلے ہی سابق صدر کو سیکیورٹی فراہم کرنے کی یقین دہانی کرا چکی ہے۔
عدالت نے پرویز مشرف کو 9 فروری تک پیش ہونے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ اگر آئندہ سماعت پر بھی وہ حاضر نہ ہوئے تو انہیں اشتہاری قرار دے دیا جائے گا۔

مصنف کے بارے میں