جمہوریت کو اس وقت خطرہ ہوتاہے جب بڑے لوگوں پر ہاتھ ڈالتے ہیں:فواد چودھری

جمہوریت کو اس وقت خطرہ ہوتاہے جب بڑے لوگوں پر ہاتھ ڈالتے ہیں:فواد چودھری
فائل فوٹو

لاہور:وزیر اطلاعات و نشریات فواد چودھری نے کہا ہے کہ جمہوریت کو اس وقت خطرہ ہوتاہے جب بڑے لوگوں پر ہاتھ ڈالتے ہیں،بڑوں پر ہاتھ ڈالیں تو سب برے ہوجاتے ہیں،پرویز مشرف کے اقتدار چھوڑتے وقت 6ہزار کروڑ روپے قرضہ تھا۔


تفصیلات کے مطابق عاصمہ جہانگیرکانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے فواد چودھری نے کہا کہ جمہوریت آئی تو قرضہ 28ہزار کروڑ پر چلا گیا، اس وقت جمہوریت کو کوئی خطرہ نہیں ہوا،جمہوریت کو ملک میں کوئی خطرہ نہیں ہے،ملک بالکل درست سمت میں جارہاہے،عمران خان کی قیادت میں ملک میں تبدیلی آئی ہے،پاکستان میں ووٹ دینے والے کو بھی پتا ہے کہ پچھلے دس سال نہیں دہرانے،پاکستان کی مڈل کلاس کسی بھی سوسائٹی کو تبدیل کرتی ہے۔

وفاقی وزیر اطلاعات کا مزید کہنا تھا کہ ایون فیلڈ میں رہنے والوں اور ہسپتال میں پڑے مریض کیلئے بھی قانون ایک جیسا ہے،ان کی وجہ سے جوانوں نے گولیاں کھا کر شہادت حاصل کی،کے پی کے میں اے این پی کے دور میں جعلی بلٹ پروف جیکٹس خریدی گئیں،پاکستان میں لوگوں کو پوچھنے کا حق ہوگاکہ اورنج ٹرین منصوبے میں سریاکس کمپنی کالگا جبکہ جب گھر لٹ جاتا ہے تو آپ ڈاکوؤں کو پکڑنے کی کوشش کرتے ہیں۔ن لیگ کو کبھی صاف شفاف الیکشن لڑنے کی عادت ہی نہیں  جبکہ گھر لوٹنے والے ڈاکوؤں کو نہیں چھوڑیں گے۔