وزیراعلیٰ سندھ نے صوبے میں مزید پابندیوں کا عندیہ دے دیا

وزیراعلیٰ سندھ نے صوبے میں مزید پابندیوں کا عندیہ دے دیا
کیپشن:    وزیراعلیٰ سندھ نے صوبے میں مزید پابندیوں کا عندیہ دے دیا سورس:   فائل فوٹو

کراچی: وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کورونا کیسز بڑھنے پر صوبے میں مزید پابندیوں کا عندیہ دیتے ہوئے کہ اگر صورتحال تشویشناک ہوتی ہے تو وفاق سے پبلک ٹرانسپورٹ پر مزید پابندیاں لگانے کا کہیں گے۔ 

پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ کورونا ایس او پیز کو فالو نہ کیا گیا تو وبا تیزی سے پھیل سکتی ہے۔گڈز ٹرانسپورٹ کو روکنے کا نہیں کہا  صرف پبلک ٹرانسپورٹ پر پابندیاں لگائی ہیں اور اگر صورتحال تشویشناک ہوتی ہے تو وفاق سے پبلک ٹرانسپورٹ پر مزید پابندیاں لگانے کا کہیں گے، پہلے بھی وفاق سے کہا تھا کہ بین الصوبائی پبلک ٹرانسپورٹ بند کی جائے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ ہم لوگوں کی ویکسی نیشن نہیں کر پا رہے یہ بڑی ناکامی ہے کیونکہ ویکسی نیشن کے بعد بھی وائرس سے بچنے کے لیے احتیاط کو نہ چھوڑیں۔ ملک میں شرح نمو ڈیڑھ فیصد سے کم ہے، ہم آئی ایم ایف کے کہنے پر قوانین بدل رہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت نے اسٹیٹ بینک کو آزاد کر دیا ہے، اب وہ کسی کو جوابدہ نہیں، اسٹیٹ بینک کو اتنا طاقتور کر دیا کہ اس کے معاملے میں کوئی کچھ نہیں کر سکتا۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ 50 لاکھ نوکریاں تو کیا ملنی تھیں اب تو ملک میں بے روزگاری مسلسل بڑھ رہی ہے جبکہ معاشی بحران سے نکلنے کے اور بھی بہت سے طریقے ہیں اور موجودہ حکومت کی پالیسیوں کے باعث ملک کی معاشی صورتحال گھمبیر ہے۔

خیال رہے کہ ملک بھر میں 24 گھنٹے کے دوران کورونا سے مزید 135 افراد جان کی بازی ہار گئے جس کے بعد اموات کی تعداد 15 ہزار 754 ہو گئی۔

گزشتہ روز کورونا کے 48 ہزار 92 ٹیسٹ کیے گئے جن میں سے 4 ہزار 681 افراد میں کورونا کی تشخیص ہوئی جبکہ 24 گھنٹے کے دوران مثبت کیسز کی شرح 9.73 فیصد رہی۔

این سی او سی کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق پاکستان میں کورونا کیسز کی مجموعی تعداد 7 لاکھ 34 ہزار 601 ہو گئی ہے۔