امریکاایران کشیدگی پرپاکستان نےتہران اور سعودی عرب سے کیاکہا؟

امریکاایران کشیدگی پرپاکستان نےتہران اور سعودی عرب سے کیاکہا؟

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ مشرق وسطیٰ میں جاری کشیدگی کے خاتمے کیلئے انہوں نے سعودی ہم منصب فیصل بن فرحان سے ریاض میں ملاقات کی جبکہ اس سے قبل انہوں نے ایران میں صدر حسن روحانی سے ملاقات کی۔


سعودی ہم منصب سے ملاقات میں سعودی عرب کے ساتھ باہمی اور سٹریٹجک تعلقات پر بات چیت کی۔شاہ محمود نے کہا انہوں نے واضح کیا ہے کہ پاکستان خطے میں کشیدگی میں کمی اور امن کیلئے کی جانے والی تمام کوششوں کی حمایت کرے گا اور تمام فریقین میں پائیدار روابط کیلئے سہولت کا ر کاکردار ادا کرے گا۔

تفصیلات کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے دو روزہ دورے کے بعد پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی تہران سے ریاض پہنچے اور سعودی وزیر خارجہ فیصل بن فرحان آل سعود سے ملاقات کی اور خطے کی تازہ ترین اور حساس صورتحال کا جائزہ لیا۔دورہ سعودی عرب کے حوالے سے اپنی تازہ ترین ٹویٹ میں شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ”میں نے سعودی ہم منصب فیصل بن فرحان سے ریاض میں ملاقات کی۔ ملاقات میں سعودی عرب کے ساتھ باہمی اور سٹریٹجک تعلقات پر بات چیت کی۔اورواضح کیا کہ پاکستان خطے میں کشیدگی میں کمی اور امن کیلئے کی جانے والی تمام کوششوں کی حمایت کرے گا اور تمام فریقین میں پائیدار روابط کیلئے سہولت کا ر کاکردار ادا کرے گا۔“