الیکشن کمیشن کا ڈسکہ ضمنی انتخاب میں دھاندلی کی انکوائری رپورٹ پبلک کرنے کا فیصلہ

الیکشن کمیشن کا ڈسکہ ضمنی انتخاب میں دھاندلی کی انکوائری رپورٹ پبلک کرنے کا فیصلہ

سیالکوٹ: الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) نے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 75 ڈسکہ انتخابات میں دھاندلی کی انکوائری رپورٹ پبلک کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 75 ڈسکہ کے ضمنی انتخابات میں دھاندلی کے معاملے پر فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی کے بعد انکوائری کمیٹی نے بھی رپورٹ تیار کرکے چیف الیکشن کمشنر کو ارسال کردی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ انکوائری کمیٹی نے رپورٹ کے ساتھ شواہد بھی لف کردیئے ہیں اور الیکشن میں منظم دھاندلی ثابت ہوئی ہے جبکہ چیف الیکشن کمشنر نے ضمنی انتخابات کی انکوائری رپورٹ 2 روز میں پبلک کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ 

ذرائع کے مطابق فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی نے انتخابات میں دھاندلی کے شبہ میں نامزد لوگوں کا فون ریکارڈ بھی حاصل کیا جبکہ نامزد افراد سے پوچھ گچھ بھی کی گئی۔

یاد رہے کہ انکوائری کمیٹی میں ایڈیشنل سیکرٹری ایڈمن منظور اختر، ہارون شنواری، ڈائریکٹر انجم بشیر، ڈپٹی ڈائریکٹر قانون صائمہ شامل تھیں۔

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 75 کے ضمنی انتخابات میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نوشین افتخار 360 پولنگ سٹیشنز سے تقریباً ایک لاکھ 10 ہزار 75 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہوئی تھیں۔ 

مصنف کے بارے میں