رابطوں کیلئے داعش واٹس ایپ گروپ استعمال کرتی ہے، گرفتار دہشتگرد کا انکشاف

کراچی: فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی کے ہاتھوں کچھ عرصہ قبل گرفتار ہونے والے داعش کے مبینہ دہشت گرد شیخ محمد عمران عرف سیف الاسلام خلافتی نے انکشاف کیا ہے کہ دنیا بھر سے رابطوں کے لیے داعش واٹس ایپ گروپ استعمال کرتی ہے جبکہ ٹیلی گرام پر آڈیو پیغامات کے تبادلے کیے جاتے ہیں۔

مزید پڑھیں: جرم ثابت ہونے پر عدالت نے عظمیٰ راؤ کو سزائے موت کی سزا سُنا دی

کراچی میں ایف آئی اے کے ہاتھوں گرفتار مبینہ دہشت گرد عمران عرف سیف الاسلام خلافتی نے حکام کو بتایا کہ داعش نے ٹیلی گرام پر اپنا گروپ بنا رکھا ہے۔ داعش کے چیٹنگ گروپ کا نام 'کدو' ہے جس کا ایڈمن بابا جانی نامی دہشت گرد ہے۔

عمران نے بتایا کہ اس گروپ میں آڈیو پیغامات کے ذریعے رابطے ہوتے ہیں جبکہ داعش کے دنیا بھر میں رابطوں کے لیے بھی واٹس ایپ گروپ استعمال کیا جاتا ہے۔ حکام کے مطابق عمران عرف سیف الاسلام خلافتی داعش کے دہشت گرد نسیم شاہ سے بھی رابطے میں تھا۔ نسیم شاہ نے ہی لیاقت یونیورسٹی آف میڈیکل اینڈ ہیلتھ سائنسز، جامشورو کی طالبہ نورین لغاری کی برین واشنگ کی جو لاہور میں ہونے والے ایک کارروائی میں مارا جا چکا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ٹکراؤ کے نتیجہ میں جمہوریت بھی ختم ہو سکتی ہے:سراج الحق

حکام کے مطابق سیف الاسلام خلافتی کو بلیک نیٹ، پراکسی اور وی پی این کی تربیت دی گئی تھی۔ اس کا ایک اور ساتھی محمد مہدی الہدیٰ ملتان میں پکڑا جا چکا ہے تاہم اس کے خلاف شواہد اکھٹے نہ کیے جا سکے اور وہ چھوٹ گیا تھا۔ مہدی الہدیٰ داعش کی وال چاکنگ، جھنڈے لگانے اور کتابچے تقسیم کرنے میں بھی ملوث رہا ہے۔

 

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں