ختم نبوت حلف نامے میں تبدیلی سے متعلق انکوائری رپورٹ منظرعام پر آگئی

ختم نبوت حلف نامے میں تبدیلی سے متعلق انکوائری رپورٹ منظرعام پر آگئی

اسلام آباد :ختم نبوت کے حلف نامے میں تبدیلی کی تحقیقاتی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ حلف نامے میں جان بوجھ کر تبدیلی کی کوشش کی گئی ہے۔


تفصیلات کے مطابق تحقیقاتی رپورٹ میں تین رکنی ٹیم نے کہاکہ حلف نامے میں جان بوجھ کر تبدیلی کی کوشش کی گئی جبکہ سپیکر قومی اسمبلی سردار ایازصادق سمیت بعض لیگی رہنماﺅں کے یہ دعوے بھی مستردکردیئے اس سے متعلق ان کا کہنا ہے کہ مبینہ تبدیلی کو لکھائی کی غلطی قراردیا۔

راجہ ظفرالحق نے تصدیق کی کہ جان بوجھ کر ترمیم کی گئی اور اس ضمن میں مسلم لیگ ن کے صدر کو بریفنگ دیدی گئی۔ رواں ماہ کے آغاز میں وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے اپنے بڑے بھائی نوازشریف سے مطالبہ کیاتھا کہ ذمہ دارشخص کو کابینہ سے نکال دیںجس کے بعد نوازشریف نے ذمہ دارشخص کے تعین کے لیے کمیٹی تشکیل دینے کا فیصلہ کیا۔

یاد رہے کہ مسلم لیگ ن کے صدر نوازشریف نے ختم نبوت حلف نامے میں مبینہ تبدیلی کی تحقیقات کے لیے سینیٹر راجہ ظفرالحق کی سربراہی میں ایک کمیٹی تشکیل دی تھی جس میں وزیرداخلہ احسن اقبال اور وفاقی وزیرماحولیات مشاہداللہ خان بھی شامل تھے اورکمیٹی کو ہدایت کی تھی کہ آئندہ چوبیس گھنٹوں کے اندر رپورٹ پیش کریں۔