پی پی پی رہنما نے وزیراعظم سے بنی گالا رہائش گاہ کو یونیورسٹی بنانے کا مطالبہ کردیا

پی پی پی رہنما نے وزیراعظم سے بنی گالا رہائش گاہ کو یونیورسٹی بنانے کا مطالبہ کردیا

کراچی:  پیپلز پارٹی نے وزیراعظم ہاوس کو یونیورسٹی بنانے کی مخالفت کر دی۔


پی پی رہنما نفیسہ شاہ نے کہا ہے کہ وزیراعظم ہاوس عمران خان کی ذاتی جاگیرنہیں، انہیں چاہئے کہ وہ اپنے ذاتی محل بنی گالہ کو یونیورسٹی بنائیں۔

پی پی رہنما نے مزید کہا کہ وزیراعظم ہاؤس حکومت پاکستان کی ملکیت ہے،اس پر عوام کا حق ہے اور مستقبل کے وزیراعظم کی رہائش کیلئے ہے،اسے یونیورسٹی بنانے کے اقدام کی سخت مخالفت کرتے ہیں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ تین سو کنال کا بنی گالہ یونیورسٹی قائم کرنے کے لئے بہت مناسب جگہ ہے، کیوں نہ بنی گالہ انسٹی ٹیوٹ آف ایگرو فاریسٹری سے آغاز کریں؟

نفیسہ شاہ کا کہنا تھا کہ میں جامعات اور کالجز قائم کرنے کے حق میں ہوں لیکن 12 لاکھ آبادی کے شہراسلام آباد میں 20 یونیورسٹیاں اور سو کالجز پہلے ہی موجود ہیں، ان کا معیار اور وسائل بڑھانے کی ضرورت ہے۔

پی پی رہنما نے مزید کہا کہ وزیراعظم ہاو?س صرف رہائش گاہ نہیں، ایک ادارہ ہے، تحریک انصاف کے یہ حربے افسوسناک ہیں۔