وزیراعظم کا سیلاب متاثرین کے اگست اور ستمبر کے بجلی کے بلز معاف کرنے کا اعلان

وزیراعظم کا سیلاب متاثرین کے اگست اور ستمبر کے بجلی کے بلز معاف کرنے کا اعلان

صحبت پور: وزیراعظم شہباز شریف نے سیلاب متاثرین کے اگست اور ستمبر کے بجلی کے بلز معاف کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ متاثرین کے امدادی کاموں میں کوئی تاخیر برداشت نہیں کریں گے۔ 

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم محمد شہباز شریف نے بلوچستان کے ضلع صحبت پور کے سیلاب سے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا جس دوران میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ صحبت پور سیلاب سے بہت متاثر ہوا، وہاں مواصلاتی نظام، فصلیں، مکانات اور سڑکیں تباہ ہوگئیں جبکہ پانی کی وجہ سے وبائی امراض تیزی سے پھیل رہے ہیں۔ 

ان کا کہنا تھا کہ ہیلی کاپٹر سے متاثرہ علاقے کا جائزہ لیا ہے اور ہر جگہ پانی ہے، سیلاب کی تباہ کاریوں نے ہر شخص کی آنکھیں کھول دی ہیں، وفاقی حکومت نے 70 ارب روپے کی خطیر رقم متاثرین کیلئے مختص کی اور اب تک 24 ارب رو پے متاثرین سیلاب میں تقسیم کئے جا چکے ہیں، متاثرین میں 100فیصد رقم کی تقسیم میں تاخیر کی وجہ انٹر نیٹ اور دیگر مسائل ہے۔

وزیراعظم نے اپیل کی کہ آج سیاست دفن کر دیں اور دکھی انسانیت کا ہاتھ تھام لیں، ریلیف کیلئے اعلانات سیاست کا حصہ نہیں، ہم نے ریاست کو بچانا ہے، اگلے مرحلے میں تباہ پل، سڑکیں ، فلائی اوورز اور چاول گندم کی فصلوں سے متعلق پروگرام بنائیں گے جبکہ سیلاب متاثرین سے اگست اور ستمبر کے بجلی بل بھی نہیں لئے جائیں گے۔ 

ان کا مزید کہنا تھا کہ متاثرین کے امدادی کاموں میں کوئی تاخیر برداشت نہیں کریں گے، متاثرین سیلاب پیاس بجھانے کیلئے ناقص اور مضر صحت پانی کا استعمال کررہے ہیں جس کے باعث پیٹ سمیت دیگر امراض میں مبتلا ہو رہے ہیں، نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (این ڈی ایم اے) کے چیئرمین کو ہدایت کی ہے کہ پاکستان بھرسے منرل واٹر اٹھا کر متاثرین میں تقسیم کریں۔

مصنف کے بارے میں