عام انتخابات میں واٹر مارک بیلٹ پیپر استعمال کرنے کا فیصلہ

عام انتخابات میں واٹر مارک بیلٹ پیپر استعمال کرنے کا فیصلہ
فوٹو: فائل

اسلام آباد: پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار عام انتخابات میں واٹر مارک بیلٹ پیپر استعمال ہونگے جس کے لئے الیکشن کمیشن نے نیشنل سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن کو ٹاسک دے دیا۔


ذرائع کے مطابق واٹر مارک بیلٹ پیپرز کے لئے کاغذ فرانس سے خریدے جائیں گے جب کہ نیشنل سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن واٹر مارک بیلٹ پیپرز کے لیے کاغذ کی خریداری کا آرڈر بھی دے دیا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ الیکشن کمیشن نے بیلٹ پیپرز کے کاغذ کی خریداری اور چھپائی کے لیے ایڈوانس رقم بھی جاری کردی ہے جو کہ پرنٹنگ پریس کارپوریشن، پوسٹل پرنٹنگ اور نیشنل سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن کو دی گئی۔

ذرائع کے مطابق بیلٹ پیپرز کی خریداری اور چھپائی پر ایک ارب 20 کروڑ روپے سے زائد اخراجات آئیں گے جب کہ الیکشن کمیشن کی جانب سے 61 کروڑ 73 لاکھ روپے کی ایڈوانس رقم جاری کی گئی ہے۔