سعودی عرب ، کرپٹ وزیروں کو دس سال کے لیے جیل جانا پڑے گا

سعودی عرب ، کرپٹ وزیروں کو دس سال کے لیے جیل جانا پڑے گا

دمام:سعودع عرب میں قانون پاس کیا گیا ہے جس کے تحت اگر کوئی بھی منسٹر کرپش میں ملوث پایا گیا یہ کرپشن پیسوں کی ہو ےا پھر کسی بھی قوم کا فائدہ حاصل کیا گیا ہو تو جرم ثابت ہونے پر دس سال کی جیل کی قید کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔


اس کے علاوہ اگر کوئی وزیر ایسے جرم میں ملوث پایا گیا جس سے ریاست کو مالی معاملات میں نقصان کا سامنا کرنا پڑا،انفرادی سطح پر لوگوں کے حقوق کو ضبط کرنا،چیزوں کی قیمتوں پر اثر انداز ہونا، زمینوں کے کاروبار میں فائدے حاصل کرنا اور کسی بھی قسم مالی فائدہ حاصل کرنا قابل سزا جرم ہو گا۔یہ جرائم ذاتی حیثیت سے ہوں یا پھر کسی دوسرے کا فائدہ پہنچانے کے لیے دونوں برابر جرائم تصور ہونگے۔