پلوامہ حملہ: پاکستان نے بھارتی حکومت اورمیڈیا کے الزامات کو مسترد کردیا

پلوامہ حملہ: پاکستان نے بھارتی حکومت اورمیڈیا کے الزامات کو مسترد کردیا
image by facebook

اسلام آباد: پاکستان نے پلوامہ حملے سے متعلق بھارتی حکومت اور میڈیا کی جانب سے بغیر تحقیقات الزام تراشی کو یکسر مسترد کردیا۔


ترجمان دفترخارجہ کے مطابق مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں حملہ باعث تشویش ہے اور پاکستان ہمیشہ مقبوضہ کشمیر میں انتہائی نوعیت کے پر تشدد واقعات کی مذمت کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان بھارتی حکومت کی جانب سے دراندازی کے الزامات مسترد کرتا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ بھارتی حکومت اور میڈیا کی جانب سے بغیر تحقیقات کے پاکستان پر الزام تراشی کو بھی مسترد کرتے ہیں۔

دوسری جانب سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر گورو آلووالیا کو دفتر خارجہ طلب کرتے ہوئے بھارت کی جانب سے پلوامہ حملے میں پاکستان پر الزامات پر شدید احتجاج کیا اور احتجاجی مراسلہ ان کے حوالے کیا گیا۔ذرائع کے مطابق احتجاجی مراسلے میں کہا گیا ہے کہ بھارت نے واقعے کی تحقیقات بھی نہیں کی اور پاکستان پر الزام دھردیا۔ 

احتجاجی مراسلے کے مطابق جیش محمد کالعدم جماعت ہے اور اس کا پاکستان سے کوئی تعلق نہیں، کالعدم جماعت کا مبینہ حملہ آور بھارت کے زیر تسلط علاقے میں موجود تھا جس کا پاکستان سے کوئی تعلق نہیں۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں کشمیری نوجوان نے بھارتی فوج کے قافلے پر خودکش کار حملہ کیا تھا جس کے نتیجے میں اب تک 49 بھارتی سیکیورٹی اہلکار ہلاک ہوچکے ہیں۔