پیپلزپارٹی سندھ اسمبلی کی اہم ترین رکن قاتلانہ حملے میں جاں بحق

پیپلزپارٹی سندھ اسمبلی کی اہم ترین رکن قاتلانہ حملے میں جاں بحق

نوشہرو فیروز :پیپلزپارٹی کی سینئر رہنما رکن سندھ اسمبلی شہناز انصاری قاتلانہ حملہ میں جاں بحق ہوگئیں۔


رکن اسمبلی کو 3گولیاں لگیں جو جان لیوا ثابت ہوئیں،ابتدائی طور پر اس بات کا بھی انکشاف ہو ا ہے کہ رکن سندھ اسمبلی کا قتل زمین کے کسی تنازعہ پر ہوا ، شہناز انصاری پر نوشہرو فیروز کے قریب گا?ں چاناری میں فائرنگ کی گئی جس میں وہ شدید زخمی ہوگئیں۔ خاتون رکن اسمبلی کو فوری طور پر شدید زخمی حالت میں نواب شاہ ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہوگئیں۔

مقتول رکن سندھ اسمبلی کے بھائی کا کہنا ہے کہ شہناز انصاری اپنے بہنوئی کے چہلم پر ا?ئی تھیں، مخالفین نے انہیں دھمکیاں دی تھیں اور چہلم میں شریک ہونے سے روکا تھا لیکن وہ رسم چہلم میں شریک ہوئیں۔ جب چہلم کے پروگرام کا اختتام ہوا تو ملزمان نے سیدھی فائرنگ کرکے خاتون کو قتل کردیا۔

نجی ٹی وی کے مطابق شہناز انصاری کا اپنے بہنوئی کے بھتیجوں کے ساتھ زمین کا تنازعہ چل رہا تھا، انہوں نے خاتون کو پہلے بھی قتل کی دھمکیاں دی تھیں، جس کے حوالے سے پولیس کو بھی ا?گاہ کردیا گیا تھا لیکن انہیں کوئی سکیورٹی فراہم نہیں کی گئی ، رسم چہلم کے پروگرام میں شہناز انصاری کرسی پر بیٹھی ہوئی تھیں، پروگرام کے اختتام پر ان کے بہنوئی کے بھتیجوں نے فائرنگ کرکے انہیں قتل کیا اور موقع سے فرار ہوگئے۔