رانا ثناءاللہ کا نام ای سی ایل میں ڈال دیا گیا

رانا ثناءاللہ کا نام ای سی ایل میں ڈال دیا گیا

اسلام آباد:پاکستان مسلم لیگ (ن)پنجاب کے صدر اور رکن قومی اسمبلی رانا ثناء اللہ خان کا نام ای سی ایل میں ڈال دیا گیا ہے۔ رانا ثناءاللہ خان کے خلاف مبینہ طور پر منشیات اسمگلنگ کا مقدمہ زیر سماعت ہے جبکہ نیب نے رانا ثناءاللہ کے اثاثوں کے حوالہ سے انکوائری بھی شروع کر رکھی ہے۔


رانا ثناءاللہ کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے حوالہ سے وفاقی کابینہ نے سفارش سرکولیشن سمری کے زریعہ منظور کی۔ نیب کی جانب سے رانا ثنااللہ کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لئے وزارت داخلہ کو خط لکھا گیا تھا جس کے بعد معاملہ وفاقی کابینہ کی ذیلی کمیٹی کو بھجوایا گیا اور ذیلی کمیٹی کی منظوری کے معاملہ وفاقی کابینہ کو منظوری کے لئے بھجوایا گیا اور وفاقی کابینہ نے سرکولیشن سمری کے زریعہ رانا ثنا اللہ کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا فیصلہ کیا ہے۔

جبکہ وفاقی کابینہ نے سابق وفاقی وزیر سینیٹر وقار احمد خان کا نام بھی ای سی ایل میں شامل کرنے کی منظوری دے دی ہے۔ سینٹر وقار کا نام بھی وفاقی کابینہ نے سرکولیشن سمری کے زریعہ ای سی ایل میں ڈالنے کی منظوری دی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز پاکستان مسلم لیگ (ن)کی نائب صدر مریم نواز شریف اور (ن)لیگ کے رکن قومی اسمبلی میاں جاوید لطیف کے نام بھی ای سی ایل میں ڈالنے کی منظوری دی گئی تھی۔