سعودی قطر تنازعہ کے حل کے لئے مصالحت کا کردار ادا کرنے کو تیار ہیں ،پاکستان

 سعودی قطر تنازعہ کے حل کے لئے مصالحت کا کردار ادا کرنے کو تیار ہیں ،پاکستان

اسلام آباد :حکومت کی طرف سے پارلیمانی قومی سلامتی کمیٹی میں باقاعدہ اعلان کردیا گیا کہ کہ ضرورت پڑنے پر پاکستان سعودی قطر تنازعہ کے حل کے لئے مصالحت کا کردار ادا کرنے کو تیار ہے جب کہ کمیٹی نے بھی متفقہ طور پر خلیج تعاون کونسل سے سعودی قطر تنازعہ حل کروانے کا مطالبہ کر دیا ہے ،کمیٹی نے پاکستان کے غیرجانبدارانہ کردار، تنازعہ پر متوازن سوچ اختیار کرنے اور عالم اسلام کے اتحاد و اتفاق کی کوششوں پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔

یمن کی طرح قطر کے معاملے پر پارلیمنٹ سے متفقہ قرارداد کی منظوری پر غور شروع کر دیا گیا ہے۔ کمیٹی نے سوشل میڈیا پر کالعدم تنظیموں کی سرگرمیوں سے متعلق پیغامات کی روک تھام کے لئے سفارشات مرتب کرنے کا اعلان بھی کیا ہے تاہم واضح کیا گیا ہے کہ فیس بک ' ٹوئٹر سمیت سوشل میڈیا ویب سائٹس کو بند نہیں کیا جاسکتا ۔

پارلیمانی قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس جمعرات کو سپیکر قومی اسمبلی چیئرمین کمیٹی سردار ایاز صادق کی صدارت میں پارلیمنٹ ہاؤس میں ہوا جوتین گھنٹوں تک جاری رہا ۔ سعودی قطر تنازعہ کلبھوشن یادو کی سزا کے خلاف عالمی عدالت میں زیرسماعت مقدمہ اور سوشل میڈیا پرکالعدم تنظیموں کی جانب سے مواد جاری کرنے سے متعلق اہم نوعیت کے معاملات پر غور کیا گیاہے۔

مشیر قومی سلامتی لیفٹیننٹ جنرل (ر) ناصر جنجوعہ مشیر خارجہ سرتاج عزیز سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے متذکرہ ایشوز پر کمیٹی کو بریفنگ دی ہے۔ اٹارنی جنرل آف پاکستان نے کلبھوشن یادو کی سزا کے خلاف عالمی عدالت میں زیرسماعت مقدمہ کی موجودہ صورتحال سے پارلیمانی کمیٹی برائے قومی سلامتی کو آگاہ کیا جب کہ کمیٹی میں یہ بھی واضح کیا گیا ہے سعودی عرب قطر میں ثالثی کا مرحلہ ابھی نہیں آیا ۔

پاکستان کی اعلیٰ سیاسی و عسکری قیادت نے اپنے حالیہ دورہ سعودی عرب کے دوران سعودی قیادت کو اس تنازعہ کو خلیج تعاون کونسل میں حل کرنے کی تجویز دی ہے۔ اجلاس کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے سپیکر سردار ایاز صادق نے کہا کہ تمام اراکین نے رائے دی ہے کہ پاکستان کو سعودی قطر تنازعہ میں غیرجانبدار کردار کو برقرار رکھنا چاہئے۔

حکومت پاکستان کی متوازن سوچ پر اطمینان کا اظہار کیا گیا ہے۔ انتہائی اہم معاملہ ہے۔ اس پر احتیاط سے بات کرنے کی ضرورت ہے۔ کمیٹی اس حوالے سے اپنی سفارشات حکومت کو آکاہ کرے گی۔ سب کی یہی رائے ہے کہ مسلم دنیا کے باہمی تنازعات کے حوالے سے پاکستان کے غیرجانبدارانہ کردار کا تسلسل ضروری ہے ایک اور قرارداد کی سفارش متوقع ہے۔ ایک سوال کے جواب میں سپیکر نے کہا کہ اس تنازعہ میں ابھی ثالثی کی سٹیج نہیں آئی۔

ضرورت پڑنے پر پاکستان مصالحت کا کردار ادا کرنے کو تیار ہے اس طرح کا کوئی عمل شروع تاحال شروع نہیں ہوا خلیج تعاون کونسل کی تناؤ میں کمی کوششیں زیادہ سودمند ثابت ہوسکتیں ہیں ۔ وزیراعظم چیف آف آرمی سٹاف کے حالیہ دورہ سعودی عرب میں بھی سعودی قیادت سے اس مسئلے کو خلیج تعاون کونسل میں حل کرنے پر بات کی گئی ہے۔

کلبھوشن یادو سے متعلق زیر سماعت مقدمہ کے بارے میں انہوں نے کہا کہ موجودہ صورتحال سے کمیٹی کو آگاہ کیا گیا۔ وزارت خارجہ نے بریفنگ دی مقدمہ کی نئی تاریخ فکسڈ نہیں ہوئی۔ اس ایشو پر زیادہ بات نہیں کر سکتے کلبھوشن یادو سے متعلق زیر سماعت مقدمہ کے بارے میں ہونے والی میٹنگ سے بھی آگاہ کیا گیا ہے ۔ ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ پارلیمانی قومی سلامتی کمیٹی کے اراکین کی یہ بھی رائے ہے کہ پاکستان کو اپنے داخلی ایشوز کا زیادہ خیال رکھنا چاہئے۔ مسلم دنیا کے اتحاد و اتفاق کی کوششیں ہونی چاہئیں۔ انہوں نے بتایا کہ سوشل میڈیا پر خاص تنظیموں کے مواد کی موجودگی کا معاملہ بھی رکھا ہے۔

سائبر کرائم سے نمٹنے کے لئے تمام متعلقہ اداروں میں قریبی رابطے اور تعاون ہونا چاہئے۔ اس مسئلے پر بھی کمیٹی سفارشات مرتب کرے گی تاہم فیس بک' ٹوئٹر سمیت سوشل میڈیا ویب سائٹس بند نہیں کی جاسکتی ہیں سوشل میڈیا کی اپنی پالیسی ہے ۔ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے تحریک انصاف کے رہنما شاہ محمود قریشی نے کہا کہ سعودی قطر تنازعہ میں ارکان کے اتفاق رائے سے نہ صرف غیرجانبدار رہنے کا مطالبہ کیا ہے کہ بلکہ یہ بھی متفقہ طور پر رائے دی ہے کہ کسی قسم کے فوجی دستے بھی نہ بھجوائے جائیں۔ پاکستان مکمل طور پر غیرجانبدار رہے۔ پاکستان کے عوام ثالثی کی کوششیں رکھتے ہیں۔

پاکستان کو ہر صورت اپنے قومی مفاد کو مقدم رکھنا چاہئے۔ سوشل میڈیا میں کالعدم تنظیموں کی طرف سے مواد ڈالنے کے معاملے پر بھی بات ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ پارلیمانی قومی سلامتی کمیٹی میں واضح کردیا گیا ہے کہ کسی متنازعہ مواد کی موجودگی کے معاملے پر فیس بک ' ٹوئٹر سمیت سوشل میڈیا ویب سائٹس کو بند نہیں کیا جاسکتا سوشل میڈیا کی اپنی پالیسی ہے جس پر اثرانداز نہیں ہوسکتے سائبر کرائم روکنے کے لئے اداروں میں قریبی تعاون کی ضرورت ہے ۔

پارلیمانی کمیٹی برائے قومی سلامتی میں سوشل میڈیا پر کالعدم تنظیموں کے مواد کی موجودگی کا معاملہ بھی اٹھا تھا اپوزیشن کی بعض جماعتوںکی طرف سے یہ معاملہ اٹھایا گیا ان پارلیمانی جماعتوں نے کالعدم تنظیموں کی طرف سے سوشل میڈیا کے بڑھتے ہوئے استعمال پر تشویش کا اظہار کیا ہے تاہم اس حوالے سے کوئی متفقہ فیصلہ نہ ہوسکا۔

کالعدم تنظیموں کی سوشل میڈیا پر سرگرمیوں پر بریفنگ دی گئی اجلاس میں قومی سلامتی و خارجہ امور کے مشیروں وزارتوںکے اعلیٰ حکام اور اٹارنی جنرل آف پاکستان نے اہم امور سے آگاہ کیا۔ سپیکر سردار ایاز صادق نے کہا کہ سوشل میڈیا پر کالعدم تنظیموں کی سرگرمیوں کے معاملے پر بھی بات کی انھوں نے کہا کہ سائبر کرائم کے سدباب سے متعلق اداروں کو مضبوط کرنے اور ان اداروں میں قریبی تعاون و رابطوں کی ضرورت ہے انھوں ساتھ واضح کیاکہ فیس بک' ٹوئٹر سمیت سوشل میڈیا ویب سائٹس بند نہیں کی جاسکتی ہیں سوشل میڈیا کی اپنی پالیسی ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں۔