امریکہ میں پاکستانی فلموں کی نمائش پر مبنی پہلا فلم فیسٹیول 3 دسمبر سے شروع ہو گا

نیویارک :  امریکہ میں پاکستانی فلموں کی نمائش پر مبنی پہلے فلم فیسٹیول کا انعقاد 3 تا 4 دسمبر کو امریکہ میں پاکستان کے مستقل مشن کے زیر اہتمام ہو گا۔دو روزہ یہ فلم فیسٹیول ایشیاءسوسائٹی میں ہو گا جس میں چند بہترین پاکستانی فلمیں نمائش کیلئے پیش کی جائے گی جو ایک ایسے وقت میں بنائی گئیں جب پاکستانی سینماءحیران کن طور پر بحالی کی جانب گامزن ہے۔

یہاں نمائش میں پیش کی جانے والی فلموں میں دو نئی فلمیں ”دوبارہ پھر سے“ اور ”لاہور سے آگے“ بھی شامل ہیں۔ ان کے علاوہ ”ایکٹر ان لاء“ آسکر ایوارڈز کیلئے نامزد ہونے والی فلم ’ماہ میر‘ آسکر ایوارڈ جیتنے والی شرمین عبید چنائے کی اینی میٹڈ فلم ’3 بہادر‘، دختر، ڈانس کہانی اور ہو من جہاں بھی اس فیسٹیول میں پیش کی جائیںگی۔یہ فیسٹیول اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی کی قیادت میں امریکہ میں موجود پاکستانی مشن کی جانب سے پاکستان کا روشن چہرہ پیش کرنے کوششوں کا ایک حصہ ہے۔ اس فیسٹیول سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ” پاکستان کے نوجوان فلم ساز ناقابل یقین حد تک بہترین فلمیں تیار کر رہے ہیں جو ملک میں جاری ثقافتی ترقی میں مددگار ثابت ہو رہی ہیں جو پاکستان میں آرٹ، موسیقی، لٹریچر اور میڈیا میں سامنے آنے والی تخلیقی آوازوں میں بھی جھلکتی ہے۔“

انہوں نے کہا کہ ”ہم پاکستان میں بنائی گئی چند فلموں میں امریکہ میں لا رہے ہیں تاکہ 193 ملوں کے سفراءکو بھی یہ دیکھنے کا موقع ملے کہ پاکستان کی شوبز انڈسٹری کیا بنا رہی ہے۔“ اس فیسٹیول کا آغاز 2 دسمبر کو اقوام متحدہ میں ریڈ کارپٹ کی تقریب سے ہو گا جہاں اقوام متحدہ میں تعینات مختلف ممالک کے نمائندوں کو بھی مدعو کیا جائیگا۔ اس کے علاوہ پاکستانی تارکین وطن، میڈیا اور فلموں کے شائقین افراد بھی شریک ہوں گے۔

مصنف کے بارے میں